سانحہ 12مئی کے ملزمان کو قانونی طور پر انجام تک نہیں پہنچایا گیا ،سربراہ پاکستان سنی تحریک

سانحہ12مئی کو علی الصبح شہید ہونے والے پی ایس ٹی کے رہنما سہیل قادری کے قاتلوں کی عدم گرفتاری سوالیہ نشان ہے ، ثروت اعجاز قادری

جمعہ مئی 23:02

سانحہ 12مئی کے ملزمان کو قانونی طور پر انجام تک نہیں پہنچایا گیا ،سربراہ ..
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 11 مئی2018ء) سربراہ پاکستان سنی تحریک محمد ثروت اعجاز قادری نے کہا ہے کہ سانحہ 12مئی کے ملزمان کو قانونی طور پر انجام تک نہیں پہنچایا گیا ،سانحہ12مئی کو علی الصبح شہید ہونے والے پی ایس ٹی کے رہنما سہیل قادری کے قاتلوں کی عدم گرفتاری سوالیہ نشان ہے ، جمہوری معاشروں میں عوام کو بنیادی حقوق کے ساتھ مکمل سماجی تحفظ بھی فراہم کیا جاتا ہے ،،پاکستان میں سماجی تحفظ کا اب تک کوئی موثر نظام موثر نہیں جس کی وجہ سے معاشرے میں عدم استحکام کا احساس عام ہورہا ہے ،،جمہوریت مایوسیوں کو ختم خوشحالی وترقی کو پروان چڑھاتی ہے مگر اس کے برعکس عوام آج بھی بے روزگاری کا شکار ہیں ،غربت کے خاتمے کیلئے کسی بھی حکومت نے خاطر خواہ اقدامات نہیں کئے ہر دور میں مہنگائی آسمان کو چھوتی رہی اور آج مہنگائی بام عروج پر ہے ،ایک طرف بے روز گاری دوسری طرف بڑھتی ہوئی مہنگائی نے غریب سے آخری نوالہ تک چھین لیا ،غربت کے ہاتھوں خودکشیوں میں اضافہ حکومتی ایوانوں کیلئے سوالیہ نشان ہے ،ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنی رہائشگا ہ قادری ہائوس پرلانڈی مجید کالونی سے آئے ہوئے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ،ثروت اعجاز قادری نے کہا کہ حکومت غریبوں کو ریلیف فراہم کرنے کیلئے ہر ممکن اقدامات کرئے ،انہوں کا کہنا تھا کہ ملک میں دہشتگرد غریبوں کی غربت کا فائدہ اٹھا کر اپنے ناپاک عزائم پورے کرتے ہیں ،غربت کو ختم کئے بغیر دہشتگردی کے ناسور کا مکمل خاتمہ ممکن نہیں ہے ،انہوں نے کہا کہ غریب عوام کیلئے تعلیم ،اسپتالوں میںمفت یا سستا علاج اور غریبوں کو اجناس مہیا کرنا حکومت ترجیعات میں شامل کرئے ،دہشتگردی کے ناسور ختم کرنے کیلئے حکومت کو آپریشن کے ساتھ سیاسی طور پر مظلوم غریب عوام کے بنیادی مسائل کو ہنگامی طور پر حل کرنا ہوگا ۔