آل رائونڈر محمد حفیظ نے بولنگ ایکشن جانچنے کے آئی سی سی کے معیار کو امتیازی قرار دیدیا

بولنگ ایکشن کو جانچنے کے آئی سی سی کے معیار میں بہت سے کرکٹ بورڈز کی طاقت ہے جس کے خلاف کوئی بولنا نہیں چاہتا میچ آفیشلز کو میرا 16 ڈگری کا بولنگ ایکشن تو نظر آ گیا لیکن بہت سے ایسے بولرز بھی ہیں جو 25، 30اور اس سے بھی زیادہ ڈگری پر بولنگ کر رہے ہیں لیکن ان کے ایکشن رپورٹ نہیں ہوئے‘گفتگو

ہفتہ مئی 23:36

آل رائونڈر محمد حفیظ نے بولنگ ایکشن جانچنے کے آئی سی سی کے معیار کو ..
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 مئی2018ء) پاکستان کے آل رائونڈر محمد حفیظ نے بولنگ ایکشن جانچنے کے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کے معیار کو امتیازی قرار دے دیا۔بی بی سی کو انٹرویو دیتے ہوئے محمد حفیظ نے کہا کہ بولنگ ایکشن کو جانچنے کے آئی سی سی کے معیار میں بہت سے کرکٹ بورڈز کی طاقت ہے جس کے خلاف کوئی بولنا نہیں چاہتا، بہت سی جگہوں پر تعلقات آڑے آ جاتے ہیں جنہیں کوئی خراب نہیں کرنا چاہتا اور بہت سی جگہوں پر نرم گوشہ بھی اختیار کیا جاتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ جب میں اپنے بولنگ کے ٹیسٹ کے لیے گیا تو پتہ چلا کہ میری بولنگ 16، 17اور 18ڈگری پر ہے، میں حیران رہ گیا کہ ایک انسانی آنکھ کیسے ایک ڈگری کے فرق کو دیکھ سکتی ہے۔قومی ٹیم کے آل رائونڈر کا کہنا تھا کہ میچ آفیشلز کو میرا 16 ڈگری کا بولنگ ایکشن تو نظر آ گیا لیکن بہت سے ایسے بولرز بھی ہیں جو 25، 30اور اس سے بھی زیادہ ڈگری پر بولنگ کر رہے ہیں لیکن ان کے ایکشن رپورٹ نہیں ہوئے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ جو بھی بولرز اس وقت انٹرنیشنل کرکٹ کھیل رہے ہیں ان کے لیے لازمی قرار دیا جائے کہ وہ اپنے بولنگ ایکشن کا بائیو مکینک ٹیسٹ کرائے اور پھر اس کے بعد انہیں کرکٹ کھیلنے کی اجازت دی جائے۔پاکستانی ٹیم میں اپنی جگہ کے حوالے سے بات کرتے ہوئے محمد حفیظ کا کہنا تھا کہ اگر کوئی یہ سمجھتا ہے کہ بولنگ کے بغیر میری ٹیم میں جگہ نہیں بنتی تو پھر میری جگہ ان کھلاڑیوں کو کھلایا جائے جو بولنگ بھی کرتے ہوں لیکن اگر وہ بھی بیٹسمین ہیں اور میری بیٹنگ اوسط ان سے زیادہ ہے تو یہ ان بیانات پر سوالیہ نشان ہے جو میرے حوالے سے دیے جاتے ہیں۔

قومی ٹی ٹونٹی ٹیم میں نہ کھلائے جانے پر آل رائونڈر کا کہنا تھا کہ پچھلے 2 سال سے مجھے ٹی ٹوئنٹی میں موقع ہی نہیں دیا گیا ہے، میں خود حیران ہوں کہ ایسا کیوں ہو رہا ہی ۔ خیال رہے کہ آئی سی سی نے چند روز قبل ہی محمد حفیظ کے بولنگ ایکشن کو کلیئر قرار دیتے ہوئے انہیں ہر قسم کے انٹرنیشنل فارمیٹ میں بولنگ کی اجازت دی ہے۔محمد حفیظ کا بولنگ ایکشن گزشتہ برس متحدہ عرب امارات میں سری لنکا کے خلاف کھیلے گئے تیسرے ون ڈے انٹرنیشنل کے دوران رپورٹ ہوا تھا۔