کوہاٹ پولیس نے اسلحہ سمگل کرنے کی ایک اور کوشش ناکام بنادی

انڈس ہائی وے پر کاروائی میں مسافر گاڑی سے قبائلی اسلحہ سمگلر کو خود کار ہتھیاروں کی بھاری کھیپ سمیت گرفتار کرلیا گیا

اتوار مئی 18:30

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 13 مئی2018ء) کوہاٹ پولیس نے اسلحہ سمگل کرنے کی ایک اور کوشش ناکام بنادی ہے۔انڈس ہائی وے پر کاروائی میں مسافر گاڑی سے قبائلی اسلحہ سمگلر کو خود کار ہتھیاروں کی بھاری کھیپ سمیت گرفتار کرلیا گیا ہے۔پکڑا گیا اسلحہ قبائلی علاقہ درہ آدم خیل سے جنوبی اضلاع کو سمگل کیا جارہا تھا۔ناجائز ہتھیاروں سمیت گرفتار ملزم کے خلاف تھانہ محمد ریاض شہید میں مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔

ضلعی پولیس سربراہ عباس مجید خان مروت کی واضح احکامات کے مطابق ناجائز ہتھیاروں کی سمگلنگ کی روک تھام کے حوالے سے اٹھائے گئے اقدامات کو عملی جامہ پہناتے ہوئے کوہاٹ شہر سے متصل قبائلی علاقوں اور دیگر شہروں سے آنیوالی شاہراہوںاور خفیہ راستوں پر چیکنگ کے عمل میں مزید تیزی لائی گئی ہے۔

(جاری ہے)

اس سلسلے میں گزشتہ روز ایک کاروائی کے دوران پولیس نے اسلحہ اور جعلی کرنسی بلوچستان سمگل کرنے کی کوشش ناکام بناکر دو بین الصوبائی سمگلروں کو گاڑی سمیت گرفتار کرلیا تھا ۔

پولیس کاروائیوں کے اس تسلسل میں اتوار کی صبح کوہاٹ انڈس ہائی وے پر ایک مرتبہ پھر ہتھیاروں کی ایک بڑی کھیپ پکڑی گئی ۔ ہے۔کاروائی میں ایس ایچ او تھانہ محمد ریاض شہید اسلام الدین نے پولیس نفری کے ہمراہ ٹنل ٹول پلازہ کے قریب پولیس چیک پوسٹ میں چیکنگ کے دوران درہ آدم خیل سے آنیوالی ایک مسافر سوزوکی پک اپ گاڑی سے ہتھیاروں کے قبائلی سمگلر گل جنان ولد زرمست سکنہ کوہی وال درہ آدم خیل کو گرفتار کرکے انکے قبضے سے مجموعی طور پر ایک کلاشنکوف،دو پستول اور ایک ہزار سے زائد مختلف بور کے کارتوس برآمد کرکے انکے خلاف تھانہ محمد ریاض شہید میں مقدمہ درج کرلیاہے۔

ابتدائی پوچھ گچھ میں زیر حراست اسلحہ سمگلر نے ناجائز ہتھیاروں کی کھیپ درہ آدم خیل سے کوہاٹ اور جنوبی اضلاع کو سمگل کرنے کا اعتراف جرم کرلیا ہے جن سے اس سلسلے میں مزید تفتیش جاری ہے۔