آج اور ماضی کے خیبر پختونخوا میں نمایاں تبدیلی آگئی ہے، مشتاق غنی

اتوار مئی 19:10

ایبٹ آباد۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 13 مئی2018ء) صوبائی وزیر برائے اعلیٰ تعلیم مشتاق احمد غنی نے کہا ہے کہ آج اور ماضی کے خیبر پختونخوا میں نمایاں تبدیلی آگئی ہے جسے ہر کوئی دیکھ اور محسوس کرسکتا ہے، ہماری کارکردگی کسی سے پوشیدہ نہیں ، ہم نے باتوں سے زیادہ عملی اقدامات کئے جس کا نتیجہ آج لوگوں کے سامنے ہے ،2013ء کے الیکشن میں کامیابی کے بعد جب ہم نے اقتدار سنبھالی تو حالات بہت دگرگوں تھے لیکن ہم نے ہمت نہیں ہاری اور اور حالات کا مقابلہ کرنے کا عزم کیا اور صوبے کے تباہ حال اداروں کی ساکھ بحال کی اور ان میں مثبت اصلاحات سے عوام کا اعتماد بحال کیا ۔

ان خیالات کا اظہارانہوں نے گورنمنٹ پوسٹ گریجویٹ کالج نمبر01ایبٹ آباد میں منعقدہ کانوکیشن کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔

(جاری ہے)

مشتاق غنی نے کہا کہ خیبرپختونخوا حکومت میں تمام بھرتیاں میرٹ پر ہوئی ہیں اور حق دار کو ان کا بغیر کسی سفارش کے مل گیا ہے، ہم نے صوبے کے دور دراز اور پسماندہ علاقوں پر یکساں توجہ دی اور ان کو ترقیافتہ علاقوں کے برابر لاکھڑا کیا اور تفریق کا سلسلہ ہمیشہ ہمیشہ کے لئے ختم کیا ۔

مشتاق غنی نے کہا کہ صوبائی حکومت ایک ایسے ایجنڈے پر عمل پیرا ہے جس کا مقصد صرف اور صرف عوام کی بلاامتیاز خدمت ہے اور اس کے ساتھ ساتھ سرکاری اداروں کو سیاسی مداخلت سے پاک او رمضبوط کرنا ہے ، ہم آج یہ بات یقین سے کہہ سکتے ہیں کہ آنے والے الیکشن میں تحریک انصاف اپنی بہترین کارکردگی کی بنیادپر خیبر پختونخوا کے علاوہ پورے ملک میں کامیابی حاصل کرے گی ۔