15 سالہ لڑکے کو جنسی ہراساں کرنے کی کوشش میں پاکستانی شہری گرفتار

دبئی کے جمیرہ ساحل پر آدمی کی 15 سالہ لڑکے کو جنسی ہراساں کرنے کی کوشش

Sadia Abbas سعدیہ عباس پیر مئی 14:12

15 سالہ لڑکے کو جنسی ہراساں کرنے کی کوشش میں پاکستانی شہری گرفتار
دبئ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 مئی2018ء) دبئی پولیس نے دبئی کے جمیرہ ساحل پر آدمی کو 15 سالہ لڑکے کو جنسی ہراساں کرنے کی کوشش پر گرفتار کر لیا ۔ مزید تفصیلات کے مطابق دبئی پراسیکیوشن کے ریکارڈز کے مطابق 27 سالہ پاکستانی اور اُسکے ایک اور ساتھی نے دبئی کے جمیرہ ساحل ہر 15 سالہ لڑکے جسکا تعلق کرغیزستان سے تھا کوجنسی طور پر ہراساں کرنے کی کوشش کی ۔

لیکن لڑکا اپنے آپ کو بچاتا ہو بھاگ گیا تاہم پاکستانی شہری اور اسکے دوست نے آخر کار لڑکے کو پکڑ لیا اور ایک سے زیادہ دفعہ اسکے جسم ک نجی حصوں کو چھونے کی کوشش کی اور ساتھ ہی ساتھ اسے زبردستی اپنے جسم کے پرائیویٹ پارٹس کو چھونے پر مجبور کیا ۔ تاہم پاکستانی نے پراسیکیوشن کے سامنے خود پرجنسی ہراسگی کے لگائے جانے والے الزامات کی تردید کر دی ہے ۔

(جاری ہے)

یہ واقع رواں سال 30 مارچ کو پیش آیا ۔ لڑکے کی والدہ نے پراسکیوشن کو بتایا کہ وہ اپنی بیٹی اور بیٹے کے ساتھ ساحل ہر گئی تھی ۔ اسی دوران اس کا بیٹا پریشان حال میں اسکے پاس آیا اور اسے تمام صورتحال سے آگاہ کیا ۔ بچے کی والدہ نے اپنے بیٹے کی بات سنتے ہی پولیس میں شکایت درج کرائی ۔ 15 سالہ لڑکے نے پولیس کو بتایا کہ جب وہ ساحل پر تھا تو اسکے والدین سستانے کے لیے بیٹھ گئے تھے جبکہ اسکا دوست کچھ کھانے کے لیے لینے گیا تھا جس وقت پاکستانی شہری اور اسکے دوست نے اسکا پیچھا کرنا شروع کر دیا ۔

بچے کی والدہ کے شکایت درج کرانے پر پولیس نے فوری کاروائی کی اور پاکستانی شہری کو اسکے دوست کے ساتھ گرفتار کیا ۔ لڑکے کے دوست نے عدالت کو بتایا کہ اسنے پاکستانی شہری اور اسکے ساتھی کو اسکے دوست کے قریب آتے دیکھا تھا ۔ عدالت نے تمام گواہوں کے بیانات ریکارڈ کر لیے ہیں ۔ تاہم عدالت نے کیس کا کوئی فیصلہ نہیں سنایا ۔ کیس کا فیصلہ اگلی سنوائی تک ملتوی کر دیا گیا ہے ۔ کیس کی اگلی سنوائی 27 مئی کو ہو گی ۔