لاہور ہائیکورٹ ، الیکشن کمیشن کی جانب سے گجرات کے تین صوبائی انتخابی حلقوں کی حلقہ بندیوں کے نوٹیفکیشن کو کالعدم قرار دیکر دوبارہ حلقہ بندیاں کرنے کا حکم دے دیا

پیر مئی 20:29

لاہور ہائیکورٹ ، الیکشن کمیشن کی جانب سے گجرات کے تین صوبائی انتخابی ..
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 مئی2018ء) لاہور ہائیکورٹ نے الیکشن کمیشن کی جانب سے گجرات کے تین صوبائی انتخابی حلقوں کی حلقہ بندیوں کے نوٹیفکیشن کو کالعدم قرار دیکر دوبارہ حلقہ بندیاں کرنے کا حکم دے دیا۔ لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس شاہد وحید نے گجرات کے عدیل اشرف کی درخواست پر سماعت کی جس میں گجرات ضلع کے صوبائی حلقوں پی پی 232 پی پی 233 پی پی 234 کی حلقہ بندیوں کو چیلنج کیا گیا۔

(جاری ہے)

درخواست گزار کے وکیل بیرسٹر علی ظفر کے مطابق الیکشن کمیشن کی جانب سے حلقہ بندیاں بدنیتی پر مبنی ہے اور موقف سننے بغیر ہی پسند نا پسند کی بنیاد پر نئی حلقہ بندیاں کر دیں درخواست گزار کے وکیل الیکشن کمیشن نے درخواست گزار کے اعتزاضات کو بھی مکمل طور نظر انداز کر دیا جس کو کوئی قانونی جواز نہیں ہے درخواست میں استدعا کی گئی کہ پی پی 232 پی پی 233 پی پی 234 کی حلقہ بندیوں کے نوٹیفیکیشن کا کالعدم قرار دیا جائے۔