کینولہ سے کاشتکاروں کو بھرپور فائدہ ہوا،سروے کسان ویلفیئر فورم

پیر مئی 22:34

لاہور۔14 مئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 مئی2018ء) کسان ویلفیئر فورم کے ایک حالیہ سروے کے مطابق امسال کینولہ کے کاشتکاروں نے بھرپور فائدہ اٹھایا ہے۔کینولہ نسبتاً ایک کم دورانیہ کی فصل ہے اور کاشتکار اس سے کم سے کم وقت میں زیادہ سے زیادہ منافع کما سکتے ہیں۔کینولہ کی گہائی کے بعد اس کا پھوک جو بچ جاتا ہے اس سے بھی کاشتکار بھرپور منافع کما سکتے ہیں۔

(جاری ہے)

اس فصل سے امسال کاشتکاروں کو حکومت پنجاب کی جانب سی5 ہزار روپے فی ایکڑ سبسڈی بھی حاصل ہوئی جس نے اس کے پیداواری رقبے میں اضافہ کیا اور کسان اس کی کاشت کی جانب راغب ہوئے۔کینولہ کی قیمت اوسطاً2300 تا2400 فی ایکڑ تک برقرار رہی۔محمد محمود سیکرٹری زراعت پنجاب نے تیلدار اجناس کی فروغ میں کلیدی کردار ادا کیا اور ان کی ہدایت پر کینولہ کے زیر کاشت رقبے میں اضافہ ہوا۔۔پاکستان ہر سال300 ارب روپے کا خوردنی تیل درآمد کرتا ہے ۔حکومتی سبسڈی اور محکمہ زراعت پنجاب کے اس اقدام سے ملکی خوردنی تیل کے درآمدی بل میں خاطر خواہ کمی کا امکان ہے۔