رمضان میں امن و امان کا قیام ،معیاری اشیائے خوردونوش کی رمضان بازاروں اور اوپن مارکیٹ میں وافر اور باآسانی دستیابی اور گراں فروشوں کے خلاف ٹھوس کاروائی ترجیحات ہوںگی،اللہ دتہ وڑائچ

پیر مئی 21:20

حافظ آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 مئی2018ء) ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو حافظ آباد اللہ دتہ وڑائچ نے کہا ہے کہ رمضان المبارک کے بابرکت مہینے میں امن و امان کا قیام ،معیاری اشیائے خوردونوش کی رمضان بازاروں اور اوپن مارکیٹ میں وافر اور بآسانی دستیابی اور گراں فروشوں کے خلاف ٹھوس کاروائی کے ذریعے عوام کو ریلیف کی فراہمی اہم حکومتی ترجیحات ہونگی جن پر تمام متعلقہ ادارے اور محکمے عمل درآمد کرانے کے ذمہ دار ہونگے۔

انہوں نے کہا کہ خدا کے فضل و کرم سے حافظ آباد کے تمام مسالک کے مابین مثالی ہم آہنگی اور بھائی چارے کی فضا موجود ہے اور ہر سال کی طرح اس بار بھی رمضان المبارک میں اس بین المسالک رواداری اور محبت کا بھر پور اظہار ہوگا۔انہوں نے قیام امن کے سلسلہ میں تمام مسالک کے جید علماء کرام کے تعاون اور انکی خدمات کو بھی خراج تحسین پیش کیا اور توقع ظاہر کی کہ رمضان المبارک کے دوران بالخصوص اور دیگر مہینوں میں بالعموم محبت اور اتفاق و یگانگت کو مذید فروغ دیکر غیر مسلم قوتوں کے عزائم کو ناکام بنایا جائیگا۔

(جاری ہے)

انہوں نے ان خیالات کا اظہار ضلعی امن کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر حافظ آباد ڈاکٹر سردار غیاث گل ،ضلعی افسران اور امن کمیٹی کے اراکین نے اجلاس میں شرکت کی ۔ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو نے کہا کہ رمضان المبارک میں مساجد،مذہبی محافل اور اجتماعات اور کاروباری مراکز کی سیکورٹی کے لیے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر کی زیر نگرانی خصوصی سیکورٹی پلان بھی تیار کر لیا گیا ہے جس کے مطابق Aپلس اور Aکیٹگری کی مساجد اور اجتماعات کے لیے پولیس کی اضافی نفری تعینات کی جائیگی جبکہ بازاروں میں رش بڑھنے کے پیش نظر بھی خصوصی حفاظتی اقدامات کو یقینی بنایا جائیگا جبکہ ضلعی انتظامیہ بھی مقامی علمای کرام کے تعاون سے امن و امان کے قیام کے لیے تمام وسائل بروئے کار لائے گی۔

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر سردار غیاث گل نے بھی ضلع میں مثالی امن و امان اور بھائی چارے کے ماحول کو علماء کرام کے مثالی تعاون کا نتیجہ قرار دیتے ہوئیاُنکی خدمات اور کردار کو خراج تحسین پیس کیا ۔انہوں نے کہا کہ پولیس کے افسران اور جوان رمضان المبارک میں سحر و افطار اور تراویح کے وقت سیکورٹی ڈیوٹی کی ادائیگی فرض اور خدمت سمجھ کر ادا کریںجبکہ بازاروں میں مشتبہ عناصر ،نو سر باز مرد خواتین اور ہلڑ بازی کرنے والوں سے فوری طو رپر موئثر انداز میں نمٹنے کے لیے بھی اقدامات کر لیے گئے ہیں۔

انہوں نے واضح کیا کہ احترام رمضان آرڈنینس کی خلاف ورزی کسی بھی صورت برداشت نہیں کی جائیگی اور بغیر اجازت ہوٹل کھولنے والوں اور سر عام کھانے پینے والوں کے خلاف بلا رو رعایت کاروائی عمل میں لائی جائیگی۔اجلاس میں علماء کرام نے امن و امان کے قیام کے سلسلہ میں اپنے مکمل تعاون کی یقین دہانی کراتے ہوئے اس عزم کا اظہار کیا کہ رمضان المبارک میں مثالی بین المسالک بھائی چارے کی روایت برقرار رکھی جائیگی۔