قومی اسمبلی نے فلسطین کے نہتے شہریوں پر اسرائیلی تشدد اور امریکی سفارتخانے کی مقبوضہ بیت المقدس منتقلی کیخلاف مذمتی قرار داد منظور کرلی

نہتے فلسطینیوں پر اسرائیلی مظالم بند کرانے کے حوالے سے موثر اقدامات اٹھائے جائیں ،ْعالمی برادری اور اقوام متحدہ سے مطالبہ

منگل مئی 14:10

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 مئی2018ء) قومی اسمبلی نے فلسطین کے نہتے شہریوں پر اسرائیلی تشدد اور امریکی سفارتخانے کی مقبوضہ بیت المقدس منتقلی کے خلاف مذمتی قرارمنظور کرتے ہوئے اقوام متحدہ اور عالمی برادری سے مطالبہ کیا ہے کہ نہتے فلسطینیوں پر اسرائیلی مظالم بند کرانے کے حوالے سے موثر اقدامات اٹھائے جائیں۔

(جاری ہے)

منگل کو قومی اسمبلی میں وزیر مملکت برائے خزانہ رانا محمد افضل خان نے تحریک پیش کی کہ فلسطین کے حوالے سے قرارداد لانے کے لئے قاعدہ 88 کے تحت قواعد معطل کئے جائیں ،ْقومی اسمبلی سے تحریک کی منظوری کے بعد پی ٹی آئی کی رکن قومی اسمبلی ڈاکٹر شیریں مزاری نے قرارداد پیش کی کہ یہ ایوان غزہ میں فلسطین کے نہتے شہریوں پر اسرائیلی مظالم‘ فلسطین پر اسرائیلی قبضے اور امریکا کی طرف سے اپنا سفارتخانہ یروشلم منتقل کرنے کی سخت مذمت کرتا ہے اور اقوام متحدہ سمیت عالمی برادری سے مطالبہ کرتا ہے کہ اس صورتحال کا نوٹس لیتے ہوئے موثر اقدامات اٹھائے جائیں۔

قومی اسمبلی نے قرارداد کی اتفاق رائے سے منظوری دے دی۔