اسلامی جمعیت طلبہ کا امریکی سفارتخانے کی منتقلی ، فلسطینیوں کی شہادت کیخلاف امریکی قونصلیٹ کے باہر احتجاجی مظاہرہ

کارکنان کی قونصلیٹ کی عمارت کی جانب بڑھنے کی کوشش ، پولیس اور سکیورٹی گارڈز سے ہا تھاپائی ، امریکہ او راسرائیل کے جھنڈے نذر آتش کیا گیا مسلمانوں کے قبلہ اول بیت المقدس میں امریکی سفارت خانے کے افتتاح کی شدید مذمت کرتے ہیں‘ ناظم جمعیت طلبہ کا خطاب

منگل مئی 18:45

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 مئی2018ء) اسلامی جمعیت طلبہ نے امریکی سفارتخانے کی مسلمانوں کے قبلہ اول بیت المقدس میں منتقلی اور اسرائیلی فوجیوں کے ہاتھوں درجنوں فلسطینیوں کی شہادت کے خلاف امریکن قونصلیٹ کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا ، جمعیت کے کارکنان کی قونصلیٹ کی عمارت کی جانب بڑھنے کی کوشش میں پولیس اور سکیورٹی گارڈز سے ہاتھا پائی بھی ہوئی، مظاہرین نے احتجاج کے دوران امریکی اور اسرائیل کے جھنڈے بھی نذر آتش کئے ۔

(جاری ہے)

تفصیلات کے مطابق اسلامی جمعیت کے کارکنان کی بڑی تعداد نے شملہ پہاڑی چوک میں امریکی قونصلیٹ کے باہر جمع ہو کر احتجاجی مظاہرہ کیا ۔۔احتجاج کے باعث شملہ پہاڑی اور اطراف کی شاہراہوں پر ٹریفک کا شدید دبائو رہا اور گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگی رہیں۔ احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے ناظم اسلامی جمعیت طلبہ لاہور حافظ ذوالنون کا کہنا تھا کہ مسلمانوں کے قبلہ اول بیت المقدس میں امریکی سفارت خانے کے افتتاح کی شدید مذمت کرتے ہیں۔ غزہ کے مظلوم مسلمانوں پر دردناک مظالم کا سلسلہ اور امریکی سفارت خانے کو فوری طور پر بند کیا جائے ۔انہوںنے کہا کہ مسلم ممالک بشمول پاکستان کے حکمران اپنی ایمانی غیرت کا مظاہرہ کرتے ہوئے صدا ئے حق بلند کریں۔