پشاور،عوام کی مشکلات کے حل کی جانب ایک اور قدم،پیشہ ورگداگروں پر پابندی عائد

منگل مئی 21:58

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 مئی2018ء) ضلعی انتظامیہ نے پیشہ ور گداگروں پر دفعہ 144کے تحت پابندی عائد کردی۔ پیشہ ور گداگروں کے لیے کے سکواڈ تشکیل۔اس حوالے سے گزشتہ روز چائلڈ پروٹیکشن اینڈ ویلفیئر کمیشن پشاور میںایک تقریب کا انعقاد کیا گیا تھا جس میں کمشنر پشاور ڈویژن شہاب علی شاہ نے سپیشل سکواڈ برائے خاتمہ گداگری کا افتتاح کیا۔

اس موقع پر ڈپٹی کمشنر پشاور ڈاکٹر عمران حامد شیخ، اسسٹنٹ کمشنر محمد مغیث ثنا ء اللہ، ڈسٹرکٹ آفیسر سوشل ویلفیئر محمد یونس آفریدی، ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر ٹائون ٹو عرفان علی ، اسسٹنٹ کمشنر یوٹی فرقان اشرف ، چائلڈ پروٹیکشن آفیسر وقار احمد اور دیگر افسران نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔اس موقع پر بات کر تے ہوئے کمشنر پشاور ڈویژن نے کہا کہ پشاور میں گداگروںکی بڑھتی ہوئی تعداد کے پیش نظر ضلعی انتظامیہ پشاور نے پیشہ ور گداگروں پر پابندی عائد کر دی ہے۔

(جاری ہے)

اس سلسلے میں ایک سپیشل سکواڈ تشکیل دیاہے جس میں خواتین پولیس بھی شامل ہیں۔ یہ سکواڈ پشاور کے مختلف مقامات پر گداگروں کو پکڑ کر بچوں کو چائلڈ پروٹیکشن سنٹر منتقل کر ے گا جبکہ خواتین گداگروں کو وومن پرٹیکشن سنٹر منتقل کیا جا ئے گا۔ ان انسٹیٹیوٹس میں ویلفیئر ہوم پشاور اور زمونگ کور بھی شامل ہیں جہاں پر ان گداگروں کی اصلاحی تربیت کی جا ئے گی اور کوشش کی جا ئے گی کہ یہ اس لعنت سے چھٹکارہ پا لیں اور اس کے ساتھ ان کی تعلیم و تربیت کا مکمل انتظامیہ بھی کیا جائے گا۔ اس کے لیے عوام سے درخواست ہے کہ وہ گداگروں کے بارے میں ضلعی انتظامیہ کی ہیلپ لائن 1052 پر اطلاع دیں۔ تاکہ معاشرے کو گداگروں سے پاک کیا جا سکے۔

متعلقہ عنوان :