مسلم سٹوڈنٹس فیڈریشن اور مسلم لیگ کے عہدیداران کی تھانہ ریس کورس میں نواز شریف کے خلاف آرٹیکل6کے تحت اندراج مقدمہ کی درخواست

درخواست چوہدری اعجاز،سہیل چیمہ،سجاد بلوچ،رانا حنیف،مبشر حسین،حافظ عامر باجوہ، زیبا احسان نے جمع کروائی

منگل مئی 22:04

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 مئی2018ء) پاکستان مسلم لیگ پنجاب کے نائب صدر چوہدری اعجاز،مسلم سٹوڈنٹس فیڈریشن کے مرکزی صدر سہیل چیمہ، سجاد بلوچ صدرمسلم لیگ لیبرونگ پنجاب،،رانا حنیف جوائنٹ سیکرٹری مسلم لیگ پنجاب،،مبشر حسین نائب صدر مسلم لیگ لاہور،،حافظ عامر باجوہ سابق ڈپٹی اسپیکر شالیمار ٹائون، زیبا احسن نائب صدر مسلم لیگ شعبہ خواتین لاہور نے سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کے سرل المیڈا کو ممبئی حملوںکے سلسلہ میں پاکستان کو ملوث کرنے کے بیان پر تھانہ ریس کورٹ لاہور میں آرٹیکل 6کے تحت اندراج مقدمہ کی درخواست جمع کروادی اپنی درخواست میں مسلم لیگی عہدیداران نے کہا کہ " گذارش ہے کہ سائیلان محب وطن پاکستانی شہری ہیں سائلان بطور سوشل سیاسی ورکرز اپنے فرائض سرانجام دیتے ہیں اور بطور سوشل و سیاسی ورکر اپنا کام فلاح انسانیت کے لیے سرانجام دیتے ہیں سائل نے تین بار حلف اٹھانے والے سابق وزیراعظم نواز شریف کا سرل المیڈا کو دیئے ہوئے انٹرویو کو دیکھا پڑھا اور سنا تو بہت دل آزاری ہوئی ۔

(جاری ہے)

جس طرح ہماری دل آزاری ہوئی ہے اسی طرح کروڑوں محبان وطن پاکستانیوں کی دل آزاری ہوئی ہے نواز شریف نے اپنے انٹرویو میں بالواسطہ طور پر اعتراف کیا ہے کہ ممبئی حملوں میں پاکستانی دہشت گردوں کا ہاتھ تھا ۔۔نواز شریف نے اپنے حلف کی پاسداری نہ کرتے ہوئے پاکستان کی سا لمیت پر حملہ کیا ہے اور آئین پاکستان کے آرٹیکل 6کی خلاف ورزی کے مرتکب ہوئے ہیں ۔

نواز شریف کے انٹرویو سے پاکستان کی سا لمیت کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا گیا ہے جو کہ سنگین غداری ہے نواز شریف کا بیان ریاست سے بغاوت کے زمرے میں آتا ہے نواز شریف پاکستانکی سیکیورٹی رسک بن چکا ہے نواز شریف قومی سلامتی کے لیے خطرہ ہے ۔ ہماری جناب سے استدعا ہے کہ نواز شریف کے بیان جو کہ ریاست مخالف انٹرویو ہے کہ ممبئی حملوں میں پاکستانی دہشتگردوں کا ہاتھ ہے نواز شریف ولد محمد شریف پر آرٹیکل 6کے تحت مقدمہ درج کرکے جلد از جلد گرفتار کیا جائے ۔ہماری چیف جسٹس آف پاکستان سے اپیل ہے کہ نواز شریف کو گرفتار کرکے مقدمہ درج کیا جائے۔"