نواز شریف سیکورٹی رسک ہیں ،انہیں بھارت اور دیگر ملک دشمن عناصر کی پشت پناہی حاصل ہے ،مظہر محمود علوی

منگل مئی 21:43

راولپنڈی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 مئی2018ء) منہاج القرآن یوتھ لیگ کے مرکزی صدر مظہر محمود علوی نے کہا ہے کہ ڈاکٹر طاہر القادری ایک عرصے سے یہ کہہ رہے تھے کہ نواز شریف پاکستان کیلئے سیکورٹی رسک ہیں ،انہیں بھارت اور دیگر ملک دشمن عناصر کی پشت پناہی حاصل ہے ،اس وقت ان کی باتوں پر ملکی اداروں نے کان نہ دھرے ،آج بمبئی حملوں بارے نواز شریف کے پاکستان کے خلاف انٹرویو نے ثابت کر دیا ہے کہ وہ احتساب عدالت سے اپنے آپ کو بچانے کیلئے دھرتی ماں کا بھی سودا کر سکتے ہیں۔

تین مئی کو احتساب عدالت کی سیڑھیوں پر کھڑے ہوکر نواز شریف نے ملکی اداروں کو دھمکی دیتے ہوئے کہا تھا کہ ان کے سینے میں بہت سے راز ہیں، اگر ان کو خلاف مقدمات کو بند نہ کیا گیا تو وہ یہ راز اگل دیں گے جس سے پاکستان ،پاک فوج اور عدلیہ کیلئے بہت سی مشکلات پیدا ہو سکتی ہیں،آج انہوں نے اپنی اس دھمکی پر عمل درآمد کردیا ان کے متنازعہ انٹرویو سے دنیاء بھر میں ملکی ساکھ کو شدید نقصان پہنچا ہے ،،پاکستان عوامی تحریک یوتھ ونگ نے اس ملک دشمنی کے خلاف ملک گیر احتجاج کر رہی ہے ،ہمارا مطالبہ ہے کہ سابق نااہل وزیر اعظم کو فوری طور پر گرفتار کر کے ان پر بغاوت کا مقدمہ چلایا جائے ۔

(جاری ہے)

ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز پاکستان عوامی تحریک یوتھ ونگ راولپنڈی کے زیر اہتمام پریس کلب کے سامنے ایک احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے کیا جس میں نوجوانوں کی ایک بڑی تعداد نے شرکت کی ۔شرکا ء نے ہاتھوں میں کتبے اٹھا رہے تھے اور وہ نواز شریف کی ملک دشمنی کے خلاف خوب نعرہ لگا رہے تھے ۔مظاہرے سے فرقان یوسف ،غلام علی خان ،عثما ن ارشد اور وسیم خٹک نے بھی خطاب کیا ۔

مقررین کا کہنا تھا کہ ڈاکٹر طاہر القادری نے دو سال قبل پاکستان میںشریف خاندان کی فیکٹریوں میں سینکڑوںبھارتی انجینئرز کی موجودگی ،ان کی آزادانہ نقل وحمل اورواہگہ باڈر پران کے سامان کی تلاشی پر پابندی کو بے نقاب کیا تھا اور میڈیا کے سامنے ٹھوس شواہد پیش کئے تھے ، کلبھوشن یادیو ، سرحدوں اورمقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کے ظلم وستم کے خلاف نواز شریف کی مکمل خاموشی ، نریندر مودی اور جندال سے ریاستی نہیں ذاتی تعلقات استوار کرنا اور بھارت میں سرمایہ کاری سب ملک دشمنی اور قابل گرفت اقدامات ہیں جن کا فوری محاسبہ ضروری ہے ۔