ساہیوال،دو ماہ قبل قتل ہونے والے سکول کے نائب قاصد کے قتل کا معمہ پولیس نے حل کر کے ایک قاتل مبین سعید کو گرفتار کر لیا

بدھ مئی 17:26

ساہیوال(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 مئی2018ء) نواحی چک 78/5.Lکے قبرستان میں دو ماہ قبل قتل ہونے والے سکول کے نائب قاصد ذو القرنین کے قتل کا پولیس نے معمہ حل کر کے ایک قاتل مبین سعید کو گرفتار کر لیا اور ملزم کے قبضہ سے پولیس نے آلہ قتل پسٹل بر آمد کر لیا ۔تفصیلات کے مطابق اسی چک کے ذو القرنین مد ثر کو 18مارچ 2018کو قبرستان میں گو لیاں مار کر قتل کر نے والے ملزم فرار ہو گئے تھے جس کے بعد پولیس یوسف والہ نے مقدمہ درج کر کے اس قتل کا معمہ حل کر لیا اور ملزم مبین سعید کو گرفتار کر لیا۔

ملزم نے دوران تفتیش انکشاف کیا کہ اس کی مقتول کی بہن سے منگنی ہوئی تھی جس کے بعد مقتول کی ماں مر گئی اور مقتول اس رشتہ کے خلاف تھا ۔چنانچہ مقتول کو راستہ سے ہٹانے کے لئے 18مارچ کو جب مقتول سکول جانے سے قبل ماں کی قبر پر گیا تو ملزم مبین سعید نے گولیاں مار کر قتل کر دیا تھا اور فرار ہو گیا تھا ۔

(جاری ہے)

ملزم نے گرفتاری کے بعد انکشاف کیا کہ ذواقرنین کے قتل کی سازش میں اسکا دوست عرفان،باپ محمد سعید اور ماں شمیم اختر بھی شامل ہیں ۔جس پر پولیس نے ملزم مبین سعید کے علاوہ دیگر تین ملزموں کے خلاف مقدمہ 109,302 ت پ درج کر لیا تھا اور ملزم مبین سعید کے قبضہ سے پسٹل اور گولیاں بھی بر آمد کر لیں اور ملزم کے خلاف اسلحہ ایکٹ کا ایک اور مقدمہ بھی درج کر لیا ہے۔

متعلقہ عنوان :