سندھ کے دس اضلاع میں جاری گیارہویں اور بارہویں جماعتوں کے سالانہ امتحانات اختتام پزیر ہو گئے

بدھ مئی 20:34

حیدر آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 مئی2018ء) حیدرآباد میں انٹر میڈیٹ کے امتحانات ختم ہو گئے ،بورڈ آاف انٹر میڈیٹ اینڈ سکینڈری ایجوکیشن حیدرآباد کے زیر اہتمام سندھ کے دس اضلاع حیدرآباد ، ٹنڈ والہیار ، مٹیاری ، ٹنڈو محمد خان ، بدین ، بے نظیر آباد ، سجاول ، ٹھٹھہ ، جام شورو اور دادو میں جاری گیارہویں اور بارہویں جماعتوں کے سالانہ امتحانات اختتام ہو گئے، امتحانات میں بورڈ نے نقل کلچر کے خاتمہ کا دعویٰ کیا تھا اور 22چھاپہ مار ٹیمیں بھی تشکیل دی تھیں جنہوں نے امتحانی مراکز پر دو درجن سے زائد جعلی امیدواروںکو پکڑا اور تین سے زائد کاپی کیس بھی بنائے لیکن اس کے باوجود نقل عروج پر رہی ہے اور طلبہ وطالبات نے کھلے عام جدید ذرائع سے نقل کی جس میں واٹس ایپ گروپ بھی شامل ہے تاہم پہلی مرتبہ حیدرآباد بورڈ کا کوئی امتحانی پرچہ آؤٹ نہیں ہوا لیکن ممتحن و نگراں عملہ کی موجودگی کے باوجود جس طرح کھلم کھلا کی گئی اور واٹس ایپ کا استعمال کیا گیا اسکی مثال پہلے نہیں ملتی جبکہ دور دراز کے امتحانی مراکز پر بااثر امیدواروں نے گھروں میں بیٹھ کر بھی امتحانی کاپیاں حل کیں بورڈ کی جانب سے نجی تعلیمی اداروں کے طلبہ وطالبات کو سہولیات دینے کی بھی شکایات موصول ہو ئی ہیں۔

متعلقہ عنوان :