یمن کی تعمیرِ نو کا بہت جلد سقطری سے آغاز ہوگا، سعودی سفیرکااعلان

تعمیر نو کا پروگرام جنگ سے متاثرہ بہت سی گورنریوں کے لیے ایک سنگ میل کی حیثیت رکھتا ہے،بیان

جمعرات مئی 14:21

صنعاء (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 مئی2018ء) یمن میں متعیّن سعودی سفیر محمد سعید آل جابر نے کہا ہے کہ جزیرے سقطری سے بہت جلد جنگ زدہ ملک کی تعمیر نو کا آغاز ہوگا۔۔سعودی پریس ایجنسی کے مطابق محمد آل جابر نے یہ بات یمن کے پبلک ورکس اور شاہرات کے وزیر انجنیئر معین عبدالملک سے ملاقات کے بعد ایک بیان میں کہی ۔ سعودی سفیر یمن میں تعمیرِ نو پروگرام کے نگران بھی ہیں ۔

یمنی وزیر نے ان سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ تعمیر نو کا پروگرام جنگ سے متاثرہ بہت سی گورنریوں کے لیے ایک سنگ میل کی حیثیت رکھتا ہے۔ بالخصوص سقطری میں جہاں تعمیر نو اور ترقی کے عمل کا سب سے پہلے آغاز کیا جائے گا۔محمد آل جابر نے بتایا کہ انھوں نے شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی ہدایت پر سقطری کا دورہ کیا ہے اور وہ اس سلسلے میں یمنی صدر عبد ربہ منصور ہادی اور ان کی حکومت سے بھی رابطے میں تھے۔

(جاری ہے)

انھوں نے کہا کہ سقطری میں یمنی شہریوں کی زندگیوں کے لیے اہمیت کے حامل مختلف ترجیحی شعبوں میں منصوبے شروع کیے جائیں گے۔انھوں نے بتایا کہ سعودی عرب نے صدر عبد ربہ منصور ہادی کی قانونی حکومت کے ذریعے یمن کو گرانقدر امداد مہیا کی ہے اور شاہ سلمان انسانی امداد اور ریلیف مرکز سمیت مختلف تنظیموں کے ذریعے یمنی عوام کے مسائل و مصائب کو کم کرنے کے لیے امدادی سامان بھیجا ہے۔

متعلقہ عنوان :