لاہور ،عدالت نے عدلیہ مخالف تقاریر کرنے والے 32 ملزمان کی جانب سے دائر درخواست ضمانت پر سماعت

جمعرات مئی 21:25

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 مئی2018ء) انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے ملزموں کے متعلق تفتیش کی مکمل رپورٹ طلب کرتے ہوئے عدلیہ مخالف تقاریر کیس کی سماعت 22 مئی تک ملتوی کر دی۔ عدالت نے عدلیہ مخالف تقاریر کرنے والے 32 ملزمان کی جانب سے دائر درخواست ضمانت پر سماعت کی۔انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نمبر تین کے جج جاوید اقبال وڑائچ نے ملزموں کی درخواست ضمانت پر سماعت کی۔

(جاری ہے)

عدلیہ مخالف تقاریر کرنے والے ملزمان کی درخواست ضمانت پر پراسیکیوٹر عبدالروف وٹو نے دلائل شروع کیے۔، پراسکیوٹر عبدالرئوف وٹو نے عدالت کوبتایا کہ نامزد ملزمان نے 13 اپریل کو قصور کشمیر چوک پر، احتجاجی مظاہرہ کیااور احتجاج کے دوران اداروں کے خلاف اشتعال انگیز نعرے بازی کی۔ ملزمان وحید، فراز ، عبدالحمید، اعجاز ، عمران ، الیاس ، غلام یسین ، محمد رزاق ، اسرار، مبارک سمیت 32 ملزمان جوڈیشل ریمانڈ پر جیل میں ہیں۔

متعلقہ عنوان :