آئیسکو چیف کا تمام فیلڈافسران کو وفاقی حکومت اور وزارت توانائی کی جانب سے جاری کردہ لو ڈ مینجمنٹ شیڈول پر سختی سے عمل کرنے کی ہدایت

جمعرات مئی 21:36

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 مئی2018ء) آئیسکو چیف باسط زمان احمد نے آئیسکو ریجن کے تمام فیلڈ افسران کو ہدایات جاری کیں ہیں کہ وفاقی حکومت اور وزارت توانائی( پاور ڈویژن) کی جانب سے جاری کردہ لو ڈ مینجمنٹ شیڈول پر سختی سے عمل کریں اور اس بات کو ہر ممکن یقینی بنائیں کہ سحر وافطار کے موقع پرلو ڈشیڈنگ نہ کی جائے اور رمضان المبارک میںصارفین کو زیادہ سے زیادہ ریلیف فراہم کیا جائے۔

ترجمان آئیسکو کی جانب سے جاری کردہ ایک پریس ریلز کے مطابق وزارت توانائی( پاور ڈویژن) نے رمضان المبارک کے مقدس مہینے میں صارفین کو بجلی کی بہتر سپلائی کو یقینی بنانے کے لئے لو ڈ مینجمنٹ میں پلان میں کمی کا فیصلہ کیا ہے جس کے تحت ممکنہ حد تک ریجن بھر میں سحر و افطار کے اوقات میںلو ڈ شیڈنگ نہیں کی جائے گی جبکہ دیگر اوقات میں10فی صد تک لائن لاسز والے فیڈرز پر ساڑھی3 گھنٹے،10فی صد سے 20فی صد تک والے فیڈرز پر ساڑھے 4 گھنٹے ، 20سے 30فی صد والے فیڈرز پر 5گھنٹے ،30سے 40فی صد والے فیڈرز پر6 گھنٹے ، 40سے 60فی صد والے فیڈرز پر7 گھنٹے ، 60سے 80فی صد والے فیڈرز پر 8گھنٹے اور 80فی صد سے زائد خسارے والے فیڈرز پر 11گھنٹے تک کی لو ڈ مینجمنٹ کی جائے گی آئیسکو چیف نے اس ضمن میں فیلڈ افسران کو واضح ہدایات جاری کیں ہیں کہ سحر و افطار کے دوران صار فین کو بجلی کی سپلائی کو یقینی بنایا جائے اور کسی بھی فالٹ کی صورت میں متعلقہ آپریشنل سٹاف فوری طور پر کاروائی کر ے اور خرابی کو دور کرے۔

(جاری ہے)

ترجمان آئیسکوکے مطابق گھریلو صارفین کو زیادہ سے زیادہ ریلیف دینے کی مد میں آئیسکو کے تمام انڈسٹریل فیڈرزکو افطار سے سحر کے دوران قریباًًساڑھے 9گھنٹے تک بجلی کی فراہمی معطل کی جائے گی ۔آئیسکو اپنے معزز صارفین کو بجلی کی بہتر فراہمی کے لئے کوشاں ہے اور آئیسکو نے صارفین سے اپیل کی ہے کہ رمضان المبار ک کے دوران خصوصاًً سحر ی اور تروایح کے دوران بجلی کے استعمال میں کفایت شعاری سے کام لیں۔

متعلقہ عنوان :