بحرانی حالات، خام تیل کی قیمت چار سال بعد بلند ترین سطح پر پہنچ گئی

ْقیمت کا سو ڈالر ہو جانا حیران کن نہیں ہو گا،ملٹی نیشنل تیل کمپنی ٹوٹل کے سربراہ کی گفتگو

جمعہ مئی 13:27

بحرانی حالات، خام تیل کی قیمت چار سال بعد بلند ترین سطح پر پہنچ گئی
واشنگٹن(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 مئی2018ء) دنیا کے مختلف خطوں میں پائے جانے والے بحرانی حالات کے باعث خام تیل کی فی بیرل قیمت بڑھ کر اب اسّی ڈالر سے بھی تجاوز کر گئی ہے۔ ملٹی نیشنل تیل کمپنی ٹوٹل کے سربراہ نے کہاہے کہ اس قیمت کا سو ڈالر ہو جانا حیران کن نہیں ہو گا۔

(جاری ہے)

سب سے زیادہ بوجھ تیل درآمد کرنے والے ممالک کے عام صارفین اٹھائیں گے، جنہیں فی لٹر زیادہ قیمت ادا کرنا پڑے گی،میڈیارپورٹس کے مطابق برطانوی دارالحکومت لندن بھی امریکی شہر نیو یارک کی طرح خام تیل اور تیل کی مصنوعات کی بین الاقوامی تجارت کی ایک بہت بڑی منڈی ہے۔

جہاں انٹرنیشنل مارکیٹ میں خام تیل کے برینٹ آئل قسم کے ایک بیرل کی قیمت مزید بڑھ کر 80 امریکی ڈالر سے بھی تجاوز کر گئی۔پچھلے چند برسوں سے تیل برآمد کرنے والے ممالک، جن میں اکثریت عرب ریاستوں کی ہے، اس بات پر مسلسل پریشان تھے کہ عالمی منڈیوں میں خام تیل کی فی بیرل قیمت مسلسل 50 ڈالر کے قریب ہی رہتی تھی۔ لیکن اب کئی بڑی وجوہات کے باعث اس قیمت میں پھر اتنا اضافہ ہو گیا ہے کہ لندن میں برینٹ آئل کے ایک بیرل کی قیمت 80.18 ڈالر تک پہنچ گئی۔

متعلقہ عنوان :