کیمیائی ہتھیار سازی میں ملوث ہونے کا شبہ،

فرانس نے چھ کمپنیوں کے اثاثے منجمد کر دئیے

جمعہ مئی 16:35

پیرس(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 مئی2018ء) فرانس نے کیمیائی ہتھیاروں کی تیاری میں ملوث ہونے کے شبے میں چھ کمپنیوں کے اثاثے منجمد کرنے کا اعلان کیا ہے۔

(جاری ہے)

غیرملکی خبر رساں اداروں کے مطابق شام، لبنان اور چین میں بیٹھ کر کام کرنے والی ان کمپنیوں پر الزام ہے کہ یہ شام میں کیمیائی ہتھیاروں کی تیاری کے ایک منصوبے سے منسلک ہیں۔ ساتھ ہی دو شامی باشندوں کو بھی اسی طرح کی پابندیوں کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ ابتدائی طور پر چھ ماہ کے لیے اثاثے منجمد کیے گئے ہیں۔ رواں برس جنوری میں بھی فرانس نے انہی الزامات کی بنیاد پر پچیس افراد اور کمپنیوں پر پابندیاں عائد کی تھیں۔

متعلقہ عنوان :