رمضان المبارک کی آمد کے ساتھ ہی ذخیرہ اندوز متحرک ہو گئے، اشیاء خوردونوش کی قیمتیں آسمان سے باتیں کرنے لگیں

جمعہ مئی 18:50

ایبٹ آباد۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 مئی2018ء) رمضان المبارک کی آمد کے ساتھ ہی ذخیرہ اندوز موقع پرست تاجر متحرک ہو گئے، اشیاء خوردونوش کی قیمتیں آسمان سے باتیں کرنے لگیں، سبزیوں اور پھلوں کی قیمتوں میں 48 گھنٹوں کے دوران دگنا اضافہ دیکھنے میں آیا، صارفین اشیاء خوردونوش کے بھائو معلوم کرنے تک محدود ہو کر رہ گئے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق ماہ رمضان المبارک کے شروع ہوتے ہی ضلع کے طول و عرض میں اشیاء خوردونوش سبزیوں اور پھلوں کی قیمتوں میں موقع پرست تاجروں نے دگنا اضافہ کر دیا۔

(جاری ہے)

چند روز قبل 30 روپے کلو فروخت ہونے والا ٹماٹر 50 سے 60 جبکہ آلو کی قیمت میں بھی دس روپے فی کلوگرام اضافہ کر دیا گیا ہے۔ اسی طرح کیلے کی قیمت میں بھی دگنا اضافہ ہو گیا ہے، رمضان المبارک سے دو روز قبل 100 روپے درجن فروخت ہونے والا کیلا رمضان المبارک شروع ہوتے ہی 180 روپے درجن پر پہنچ گیا ہے جبکہ سیب تین سو روپے فی کلو فروخت ہو رہا ہے۔ گوشت سرکاری نرخوں سے 50 روپے زائد ہو رہا ہے، اسی طرح مرغی کی قیمت بھی 190 روپے فی کلو گرام تک پہنچ گئی جو غریب آدمی کی قوت خرید سے باہر ہے۔

متعلقہ عنوان :