امریکی ریاست ٹیکساس میں ہائی سکول کے اپنے ہی طالبعلم کی دہشت گردی سے آٹھ افراد ہلاک ہوگئے

جمعہ مئی 23:00

واشنگٹن ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 مئی2018ء) امریکی ریاست ٹیکساس میں پولیس حکام نے کہا ہے کہ ایک ہائی سکول کے اپنے ہی طالبعلم کی دہشت گردی کے نتیجے میں آٹھ سے دس افراد ہلاک ہوگئے ہیں جن میں اکثریت طلبہ کی ہے۔ہیرس کاؤنٹی کے شیرف کا کہنا ہے کہ فائرنگ کا یہ واقعہ سینٹا فے ہائی سکول میں ہوا۔ سکول حکام کا کہنا ہے کہ ایک شخص کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔

(جاری ہے)

برطانوی خبررساں ادارے کے مطابق سکول حکام نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ سکول میں دہشت گردی کرنے والا اسی سکول کا طالب علم ہے جو اس وقت حراست میں ہے۔۔پولیس نے سکول کو گھیرے میں لے لیا ہے۔آخری اطلاعات تک سکول میں بم ڈسپوزل سکواڈ کے علاوہ فضائی ایمبولینس بھی پہنچ چکی ہے۔مقامی محکمہ تعلیم کا کہنا ہے کہ ’ممکنہ طور پر بارودی ڈیوائس‘ سکول کے اندر اور باہر سے ملی ہیں۔ محکمہ تعلیم کے حکام نے مزید کہا کہ سکیورٹی فورسز ان ڈیوائسز کو ناکارہ کرنے میں مصروف ہیں۔سینٹا فے سکول نے ٹویٹ میں کہا کہ سکول کو خالی کرا لیا گیا ہے۔

متعلقہ عنوان :