تیل وگیس کی تلاش اورپیداواردینے والی کمپنیوں نے خیبرپختونخوا میں کئی ٹریلین کیوبک فٹ گیس اور500ملین بیرل تیل کے متوقع ذخائر کی تلاش اوردریافت کیلئے سرگرمیاں تیزکرد یں

ہفتہ مئی 14:23

تیل وگیس کی تلاش اورپیداواردینے والی کمپنیوں نے خیبرپختونخوا میں کئی ..
اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 مئی2018ء) تیل وگیس کی تلاش اورپیداواردینے والی کمپنیوں نے خیبرپختونخوا کے مختلف علاقوں میں کئی ٹریلین کیوبک فٹ گیس اور500ملین بیرل تیل کے متوقع ذخائر کی تلاش اوردریافت کیلئے سرگرمیاں تیزکردی ہیں۔سرکاری ذرائع نے اے پی پی کوبتایاکہ خیبرپختونخواکے مختلف علاقوں بالخصوص کوہاٹ بیسن میں اوجی ڈی سی ایل اورمول کی جانب سے کامیاب دریافتوں کے بعد تیل وگیس کی تلاش اورپیداواردینے والی کمپنیوں نے یہاں اپنی توجہ مرکوزکرلی ہے،ان علاقوں میں تیل اورگیس کے وسیع ذخائر کاامکان ہے جنہیں تلاش اوردریافت کرکے ملک میں تیل وگیس کی ضروریات کو پوراکرنے کیلئے استعمال میں لایا جاسکتاہے۔

ذرائع کے مطابق گزشتہ 17برسوں میں اوجی ڈی سی ایل اورمول نے خیبرپختونخواکے مختلف آئل فیلڈز سے وسیع مقدارمیں تیل اورگیس کی پیداوارحاصل کی ہے، اس عرصہ میں دونوں کمپنیوں نے 8کروڑ99لاکھ 98ہزار250بیرل خام تیل اور8کروڑ72لاکھ17ہزار244ملین کیوبک فٹ گیس کی پیداوارحاصل کی۔

(جاری ہے)

اوجی ڈی سی ایل نے ضلع کوہاٹ کے چندافیلڈ سے ایک کروڑ55لاکھ 67ہزار543 بیرل خام تیل،، 2کروڑ96لاکھ 26ہزار201ملین کیوبک فٹ گیس اور43ہزار671میٹرک ٹن ایل پی جی کی پیداوارحاصل کی۔ضلع کرک کے نشپہ فیلڈ سے اوجی ڈی سی ایل نے 3کروڑ84لاکھ7ہزار733بیرل خام تیل اور11کروڑ46لاکھ54ہزار724ملین کیوبک فٹ گیس کی پیداوارحاصل کی۔اسی طرح شکردرہ ،شیخان اوردیگرفیلڈز سے بھی کافی مقدارمیں تیل وگیس کی پیداوارحاصل کی گئی ہے۔