چیئرمین بلدیہ شرقی سے اندرون سندھ کے بلدیاتی نمائندگان کے وفد کی ملاقات

ہماری کوشش ہوتی ہے جو بھی فنڈز دستیاب ہیں اسے بہترین حکمت عملی کے تحت استعمال کیا جائے،معید انور کراچی میں آکر یہ دیکھنا چاہتے ہیں کہ کس طرح محدود و کم وسائل ، بجٹ کی کمی اور اختیارات کی بھیڑ چال میں ترقیاتی کام سر انجام دیئے جا سکتے ہیں،وفد کی بات چیت

ہفتہ مئی 16:03

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 مئی2018ء) چیئرمین بلدیہ شرقی معید انور، وائس چیئرمین عبدالرؤف خان اور میونسپل کمشنر اختر علی شیخ سے اندرون سندھ کے بلدیاتی نمائندگان کے وفد نے ملاقات کی، وفدمیں جامشورو سمیت دیگر سندھ کے اضلاع سے لوگ شامل تھے۔ ملاقات کے دوران رسمی گرمجوشیی کے ساتھ مہمان گرامی کا استقبال کیا گیا اور انہیں پھولوں کے گلدستے پیش کیئے گئے جبکہ سندھ کے بلدیاتی نمائندگا ن نے بھی تحفے تحائف پیش کیئے ، اس موقع پر جامشورو سے تعلق رکھنے والے بلدیاتی وائس چیئرمین محمد اکرم لاکھو نے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ہم مطالعاتی دورے پر سندھ کے دیگر اضلاع میں جا کر بلدیاتی نظام کا معائنہ کر رہے ہیں ، ہم اختیارات کے لحاظ سے انتہائی ابتر صورتحال میں ہیں نہ ہمارے پاس بجٹ ہے اور نہ ہی اختیارات جس کے ذریعے ہم عوام کی خدمت سر انجام دے سکیں ، لوگوں نے ہمیں منتخب کرکے بلدیاتی نمائندہ بنا دیا ہے مگر ہم انکی توقعات پر پورا اترنے میں بری طرح ناکام ہیں۔

(جاری ہے)

کراچی میں آکر یہ دیکھنا چاہتے ہیں کہ کس طرح محدود و کم وسائل ، بجٹ کی کمی اور اختیارات کی بھیڑ چال میں ترقیاتی کام سر انجام دیئے جا سکتے ہیں۔ چیئرمین بلدیہ شرقی معید انور نے سندھ کے بلدیاتی نمائندگان کو خوش آمدید کہتے ہوئے کہا کہ جس طرح کی بلدیاتی مشکلات کا آپ شکار ہیں اسی طرح کی مشکلات کا ہم بھی شکار ہیں ، ہماری کوشش ہوتی ہے کہ جو بھی فنڈز دستیاب ہیں اسے حکمت عملی کے تحت استعمال کیا جائے۔

پہلے ترجیح تنخواہوں ، پیٹرول و ڈیزل کی ادائیگی ہوتی ہے اس کے بعد ترقیاتی کاموں کیلئے فنڈز استعمال میں لائے جاتے ہیں ، حکومت سندھ کی فنڈنگ کے بجائے ہماری کوشش ہوتی ہے کہ اپنے ذرائع آمدنی کو بہتر بنایا جائے۔ وائس چیئرمین بلدیہ شرقی عبدالرؤف خان اور میونسپل کمشنر اختر علی شیخ نے بھی بلدیاتی نظام کے حوالے سے سندھ کے بلدیاتی نمائندگان کو بریفنگ دی۔ اس موقع پر ایس ای ایسٹ طارق مغلدسمیت دیگر افسران بھی موجود تھے۔