سندھی قوم پرستوں کی شمولیت اور ان کی مشاورت کے بغیر بننے والی صوبائی نگران حکومت کو سندھی قوم قبول نہیں کرے گی،اشرف نوناری

ہفتہ مئی 19:10

حیدرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 مئی2018ء) سندھ نیشنل تحریک کہ سربراہ اشرف نوناری نے کہا ہے کہ سندھی قوم پرستوں کی شمولیت اور ان کی مشاورت کے بغیر بننے والی صوبائی نگران حکومت کو سندھی قوم قبول نہیں کرے گی، کرپشن کے خاتمے اور سندھ کی ترقی و خوشحالی کیلئے ضروری ہے کہ قوم پرستوں کو نگران صوبائی حکومت میں شامل کر کہ پاور دیا جائے، انہوں نے کہا کے سندھ میں بہتر تعلیم،، صحت، صفحائی ترقی اور امن وامان کی بحالی سمیت سندھ کے بنیادی مسائل قوم پرست با آسانی حل کرسکتے ہیں بشرطیہ ان کو پاور پولیٹکس میں اسٹیک ہولڈر بنایا جائے، انہوں نے کہا کہ نگران حکومت میں کوئی ریٹائرڈ جج، کوئی افسر یا بزرگ دیاستدان سندھ کے بنیادی مسائل کو اتنا نہیں سمجھ سکتا جتنا سندھ کے قوم پرست سندھ کے مسائل سے واقف ہیں، سندھ کے تمام مسائل کا حل قوم پرستوں کے پاس موجود ہے مگر ایک سازش کے تحت سندھ کے قوم پرستون کو سندھ کی خدمت سے دور رکہا گیا ہے اور سندھ کا اقتدار ہمیشہ نگران حکومت یا جنرل الیکشن کے بعد بننے والی حکومتوں کی صورت میں چورون لٹیرون اور کرپٹ لوگون کے حوالے کیا جاتا ہے جو اقتدار میں آکر سندھ کے مسائل حل کرنے کے بجائے مزید مسائل پئدا کرتے ہیں، انہوں نے ملکی اسٹبلشمینٹ سے کہا کے سندھ کے قوم پرست ملک دشمن نہیں بلکہ محب وطن ہیں جن کو بھی اقتدار میں شریک کرکے سندھ کی خدمت کرنے کا عملی موقع فراہم کیا جائے باقی ریٹائرڈ بیورو کرسی اور سیاستدانوں پر مشتمل نگران حکومت سندھ کے مسائل حل نہیں کرسکتی۔