پیپلز پارٹی نے عمران خان کے 100 دن کے پروگرام جو خالی خواہشات قرار دے دیا

پی ٹی آئی کا سو دن کا پلان کو ایک خواہشات کی فہرست کے سوا کچھ کچھ نہیں، یہ سو دن کا پلان بھی گزشتہ انتخابات کے نوے دن کے پلان جیسا ہی معلوم ہوتا ہے،نفیسہ شاہ کا ردعمل

اتوار مئی 23:10

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 20 مئی2018ء) پاکستان پیپلز پارٹی نے عمران خان کے 100 دن کے پروگرام جو خالی خواہشات قرار دے دیا ہے ۔پیپلزپارٹی کی رہنماء نفیسہ شاہ نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ پی ٹی آئی کا سو دن کا پلان کو ایک خواہشات کی فہرست کے سوا کچھ کچھ نہیں، یہ سو دن کا پلان بھی گزشتہ انتخابات کے نوے دن کے پلان جیسا ہی معلوم ہوتا ہے۔

پانچ سال قبل عمران خان نے نوے دن میں سب تبدیل کرنے کا وعدہ کیا تھا۔ عمران خان نے ایوان وزیر اعلی اور گورنر ہاوس کو لائبریریوں میں تبدیل کرنے کا عزم کیا تھا۔ صحت، تعلیم اور انصاف کے شعبے میں کرپشن ختم کرنے کے وعدے کا کیا ہوا نفیسہ شاہ کا کہنا تھاکہ کی پی کے میں نئی یونیورسٹی اور نئے ہسپتال کاٴْوجود دکھائی نہیں دیتا۔

(جاری ہے)

بی آر ٹی ، جو کہ اب ایک سکینڈل بن چکا ہے ۔

میٹرو بنانے کیلئے پشاور جسیے تاریخی شہر کو تباہ کر دیا گیا۔ پچاس ارب روپے کا پراجیکٹ 80 ارب چلے جانا کرپش اور ناقص منصوبہ بندی کی بدترین مثال ہے۔ چیف جسٹس نے خود کہا کہ خیبرپختونخواہ میں ترقی کے دعوے بہت لیکن ترقی نہیں۔ وزیراعلی خیبرپختونخواہ چیف جسٹس کے سوالات کے جواب نہ دے سکے۔ اس وقت پاکستان کے دو لیڈرز ایسے ہیں جنہیں صرف اقتدار سے مطلب ہے، نفیسہ شاہ نے مزید کہا نواز شریف ہیں جو خلائی مخلوق سے لڑنے کے خواہش مند ہیں، دوسرے عمران خان ہیں جن کے پاس صرف دعوے ہیں۔ عمران خان سمجھتے ہیں ان کے پاس جادو کی چھڑی ہے۔ عمران خان جادو کہ چھڑی سے دودھ اور شہد کی ندیاں بہانے کے دعوے کر رہے ہیں۔