صنعاء میں باغیوں کے ٹھکانوں پر اتحادی طیاروں کی شدید بمباری،49ہلاک

فورسز کی ساحلی ڈاریکٹوریٹ التحیتا میں حوثی ملیشیا کے خلاف الگ کارروائی کے دوران26 جنگجوگرفتار

پیر مئی 12:06

ریاض(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 21 مئی2018ء) عرب اتحادی فوج نے یمن کے دارالحکومت صنعاء میں کئی مقامات پر حوثی باغیوں کے اسلحہ کے مراکز اور ان کے عسکری کیمپوں پر شدید بمباری کی ہے جس کے نتیجے میں 49باغی ہلاک ہوگئے ادھر ساحلی ڈاریکٹوریٹ التحیتا میں حوثی ملیشیا کے خلاف ایک کارروائی کے دوران26 جنگجوؤں کو گرفتار کرلیاگیا،عرب ٹی وی کے مطابق یمن میں آئینی حکومت کی معاون عرب فوج کے جنگی طیاروں نے جنوبی صنعاء میں الحفا کیمپ، جبل نقم اور جنوب میں جبل النقم میں باغیوں کے ٹھکانوں پر بم باری کی۔

(جاری ہے)

مقامی ذرائع کا کہنا تھا کہ صنعاء کے جنوب مغربی ساحلی علاقوں میں طیاروں کی جانب سے بمباری سے قبل شہری آبادی پر پمفلٹ گرائے گئے جن میں شہریوں کو ہدایت کی گئی کہ وہ لڑائی کے علاقوں سے دور رہیں تاکہ انہیں کسی قسم کا جانی نقصان نہ پہنچے۔۔یمن کے عسکری ذریعے کا کہنا تھا کہ ساحلی ڈاریکٹوریٹ التحیتا میں حوثی ملیشیا کے خلاف ایک کارروائی کے دوران 26 جنگجوؤں کو گرفتار کیا گیا ہے۔ ان میں میھار منتظری نام کا ایک ایرانی افسر بھی شامل ہے۔ادھر ملک کے شمالی شہر صعدہ میں عسکری ذرائع کے مطابق فوج کے ساتھ لڑائی میں حوثیوں کے الحسین بریگیڈ کے سربراہ احمد محمد علی العابد اپنے کئی ساتھیوں سمیت مارا گیا۔

متعلقہ عنوان :