دروغ گوئی کی سیاست ہمارا وطیرہ نہیں ہے،

ہم منتخب ہوکر شہر کے بنیادی مسائل کی جانب مکمل توجہ کے ساتھ ساتھ ترقیاتی فنڈ کا پچاس فیصد شہر میں خرچ کریں گے ، حلقہ پی بی 13 جعفرآباد سے نامزد امیدوار میر عمر خان جمالی

پیر مئی 14:43

جعفرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 21 مئی2018ء) حلقہ پی بی 13 جعفرآباد سے نامزد امیدوار میر عمر خان جمالی نے کہا ہے کہ دروغ گوئی کی سیاست ہمارا وطیرہ نہیں ہے ہم منتخب ہوکر شہر کے بنیادی مسائل کی جانب مکمل توجہ کے ساتھ ساتھ ترقیاتی فنڈ کا پچاس فیصد شہر میں خرچ کیے جائیں گے بہترین تعلیمی ادارے صحت کے اچھے مراکز سیوریج کی بہتری بجلی کا اچھا نظام لاکر پینے کے صاف پانی ہماری ترجہات میں شامل ہیں اور ڈیرہ اللہ یار میں میرٹ پرآفسران کی تعیناتی عمل میں لائی جائے گی سرکا ری آ فسران عوام کے خادم ہیں انکا فرائض منصبی میں شامل ہے کہ وہ شہریوں کے مسائل حل کریں کرپٹ افراد کا ہمارے پاس ٹھکانہ نہیں ہے ۔

حلقہ پی بی 13 جعفرآباد سے الحاج میر ظفراللہ خان جمالی کے نامزد امیدوار میر عمر خان جمالی نے کہا ہے ملکی سالمیت پر کسی قسم کا سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا، ملک دشمن عناصروں کی سازشوں کو ناکام بنانے کے لیے قوم پاک فوج کے شانہ بشانہ کھڑی ہے ، وطن کی حفاظت کے لیے جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والے پاک فوج،، ایف سی،، پولیس اور دیگر محافظوں کا خون رائیگاں ہونے نہیں دینگے۔

(جاری ہے)

ان خیالات کا اظہار انہوں نے شہید مراد کالونی ڈیرہ اللہ یار میں علی حسن گڈانی اور گڈانی برادری کی جانب سے اپنے اعزاز میں منعقدہ ایک پروقار جلسہ عام کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا جلسہ عام میں گڈانی برادری، لاشاری برادری، کھوسہ برادری، بگٹی برادری و اہلیان محلہ نے 2018 ء کے عام انتخابات میں الحاج میر ظفراللہ خان جمالی اور میر عمر خان جمالی کی بھرپور حمایت کا اعلان کیا میر عمر خان جمالی نے کہا کہ سیاسی مخالفین دھونس دھمکیاں دینے کیساتھ پیسے کی لالچ سے باشعور عوام کا ووٹ خریدنے کا خواب دیکھ رہے ہیں تاہم مجھے اللہ تعالیٰ اور اپنے حلقہ کے عوام پر پختہ یقین ہے کہ سیاسی مداریوں کی چالیں ناکام ہوجائیں گی اور عوام انہیں بری شکست سے دوچار کرینگے ۔

انکا کہنا تھا کہ ڈیرہ اللہ یار شہر کو کھنڈرات میں تبدیل کردیا گیا شہر کا ہر ایک باشندہ بنیادی سہولیات کی عدم فراہمی کا رونا رو رہا ہے ،،سیلاب کا شوشہ چھوڑ کر عوام کے دلوں میں نفرت کا بیج بونے کی کوشش کرنے والے بتائیں کہ 2010 ء کے سیلاب کے وقت وہ کہاں تھے۔ انہوں نے عوام کی کیا خدمت کی یہ میرے والد بزرگ سابق وزیر اعظم میر ظفراللہ خان جمالی تھے جو کہ اپنے فرزندان کے ہمراہ دوران سیلاب ڈیرہ اللہ یار میں موجود تھے اور عوام کے دکھوں اور تکالیف کے خاتمے کے لیے اقدامات کررہے تھے ،مخالفین کس منہ سے شہر کے ڈبونے کے الزامات ہم پر عائد کررہے ہیں۔