لیڈی ہیلتھ ورکر کا تنخواہوں کے عدم فراہمی کے خلاف دھرنا، پاک افغان شاہراہ بند

پیر مئی 18:48

لنڈیکوتل ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 21 مئی2018ء) جمرود تاریخی باب خیبر کے مقام پر لیڈی ہیلتھ ورکر ز نے تخواہوں کی عدم فراہمی کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا جس میں انہوں نے ہاتھوں میں بینرزو پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے جس پر گیارہ مہینوں سے بند تنخواہوں کے عدم فراہمی کے خلاف نعرے درج تھے ۔لیڈی ہیلتھ ورکرز نے پاک افغان شاہراہ پر دھرنا دے کر شاہراہ کو ہر قسم کے ٹریفک کے لیے بند کردیا ۔

(جاری ہے)

لیڈی ہیلتھ ورکرز نے میڈیا کو بتایا کہ وہ پر خطر علاقوں میں اپنے فرائض پورا کررہے ہیں جبکہ انسداد پولیو مہم کامیابی سے ہمکنار کیا تاہم فاٹا سیکرٹریٹ و محکمہ صحت خیبر ایجنسی ان کو گیارہ مہینے سے تنخواہیں دینے میں ناکام ہے جس کی وجہ سے ان کے گھرمیں ماہ رمضان میں فاقے پڑ گئے ہیں اس لیے ہمیں پولیو مہمات کی معاوضہ جبکہ تنخواہیں فراہم کی جائے ۔محکمہ صحت و پولیٹیکل انتظامیہ اور مشران نے لیڈی ہیلتھ ورکر ز کے ساتھ مذاکرات کرکے ان کے مسائل حل کرنے کی یقین دہانی کرائی جسکے مظاہرین پر امن طور پر منتشر ہوگئے ۔