قانون ساز اسمبلی‘ بجٹ اجلاس کے موقع پر اپوزیشن کی ہنگامہ آرائی‘ نعرے بازی کی گئی

پیر مئی 19:31

مظفرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 21 مئی2018ء) بجٹ اجلاس کے موقع پر آزادجموںوکشمیراپوزیشن نے شدید ہنگامہ آرئی کی ،تلاوت کلام پاک کے بعد سپیکر اسمبلی شاہ غلام قادر نے وزیر خزانہ ڈ اکٹر نجیب نقی کو بجٹ پیش کرنے کو کہا تو آل جموںوکشمیر مسلم کانفرنس کے صدر سردار عتیق احمد خان اپوزیشن لیڈر چوہدری محمد یاسین ،ممبر اسمبلی ملک محمد نواز ،سردار صغیر چغتائی ،دیوان محی الدین ،عبدالماجد خان ،شازیہ اکبر اپنی سیٹوں پر کھڑے ہو کر شدید نعرہ بازی شروع کر دی ۔

اجلاس ختم ہونے کے بعد مسلم کانفرنس کے صدر سردار عتیق احمد خان نے کہا کہ ہمارے احتجاج کا مقصد یہ ہے کہ بجٹ اجلاس اپنے وقت پر نہیں ہورہا بلکہ بجٹ اجلاس میں اپوزیشن کو بُری طرح نظر انداز کیا بجٹ کی تیاری میں اپوزیشن ممبران سے کوئی تجاویز نہیں لی گئی آزادکشمیر میں افراتفری کا عالم ہے منتخب ممبران اسمبلی کو بلڈوز کیا جارہا ہے میرٹ کے نام پر اقرابا پروری اور انتقامی کارروائیاں کی جارہی ہیں تحریک کے محاذ پر بھی حکومت بُری طرح ناکام ہوچکی ہے ان حالات میں اپوزیشن نے اس کے سوا کی چارکار نہیں کہ وہ عوامی حقوق کی ترجمان کرتے ہوئے اسمبلی کے اندر اور باہر عوام کی آوازبلند کرتی رہے گی ۔

(جاری ہے)

اُن کا مزید کہنا تھا کہ حکومت نے جوبھی بلند وبانگ دعویٰ کیے تھے اُن میں سے آج تک ایک بھی پورا نہیںہوا ۔بلکہ عوام کو مسائل کے دلدل میں پھنسیا جارہا ہے ۔