امریکی ریاست ٹیکساس کے ہائی سکول میں فائرنگ سے جاں بحق ہونے والی 17سالہ پاکستانی طالبہ سبیکا عزیز شیخ کا جسد خاکی کل کراچی پہنچے گا

نماز جنازہ آج صبح نو بجے ادا کیا جائے گا ،بڑی تعداد میں لوگ نمازِ جنازہ میں شرکت کے خواہش مند تھے اسی لیے حکیم سعید گراؤنڈ میں نمازِ جنازہ کا فیصلہ کیا گیا، والد جلیل شیخ امریکا سے پاکستان میت بھیجنے اور وصول کرنے کی کارروائی میں تمام حکام مدد فراہم کررہے ہیں اور ہیوسٹن میں پاکستانی قونصلیٹ کی قونصل جنرل عائشہ فاروقی بھی اہل خانہ سے مسلسل رابطے میں ہیں، میڈیا سے گفتگو

منگل مئی 19:21

امریکی ریاست ٹیکساس کے ہائی سکول میں فائرنگ سے جاں بحق ہونے والی 17سالہ ..
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 مئی2018ء) امریکی ریاست ٹیکساس کے شہر ہیوسٹن کے ایک ہائی اسکول میں فائرنگ کے نتیجے میں جاں بحق ہونے والی 17 سالہ پاکستانی طالبہ سبیکا عزیز شیخ کا جسد خاکی 23 مئی کو علی الصبح کراچی پہنچے گا۔اس ضمن میں میڈیاسے گفتگو کرتے ہوئے سبیکا کے والد عزیز جلیل شیخ نے بتایا کہ سبیکا کا جسد خاکی بدھ کی صبح 4 بجے کراچی پہنچے گا، جس کے بعد ان کی نمازِ جنازہ بدھ کی صبح 9 بجے گلشن اقبال میں قائم حکیم سعید گراؤنڈ میں ادا کی جائے گی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ بڑی تعداد میں لوگ نمازِ جنازہ میں شرکت کے خواہش مند تھے اسی لیے حکیم سعید گراؤنڈ میں نمازِ جنازہ کا فیصلہ کیا گیا۔سبیکا شیخ کی نمازِ جنازہ کے حوالے سے مزید آگاہ کرتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ سبیکا کی تدفین عظیم پورہ قبرستان شاہ فیصل کالونی میں کی جائے گی۔

(جاری ہے)

جلیل شیخ نے کہا کہ امریکا سے پاکستان میت بھیجنے اور وصول کرنے کی کارروائی میں تمام حکام مدد فراہم کررہے ہیں اور ہیوسٹن میں پاکستانی قونصلیٹ کی قونصل جنرل عائشہ فاروقی بھی اہل خانہ سے مسلسل رابطے میں ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ نماز جنازہ کے حوالے سے کراچی میں بھی انتظامیہ مکمل تعاون کر رہی ہے، جس میں عوام کی بڑی تعداد کے ساتھ سرکاری حکام اور سیاسی شخصیات کی شرکت بھی متوقع ہے جبکہ دوست احباب اور عزیز واقارب کی آمد کا سلسلہ بھی شروع ہوگیا۔سبیکا کے گھر تعزیت کرنے کے لیے آنے والے افراد کا سلسلہ جاری ہے جس میں وزیراعظم شاہد خاقان عباسی،، گورنر سندھ محمد زبیر،امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمان اور متحدہ قومی موومنٹ ((ایم کیو ایم)) پاکستان کے رہنما ڈاکٹر فاروق ستار بھی شامل تھے۔

اس کے علاوہ گزشتہ روز امریکی سفیر بھی اہل خانہ سے تعزیت کے لیے ان کے گھر پہنچے اور افسوس کا اظہار کیا۔واضح رہے کہ ہیوسٹن میں سبیکا کی پہلی نماز جنازہ ادا کی جاچکی ہے جس میں امریکا میں مقیم پاکستانی برادری نے بڑی تعداد میں شرکت کی، اس موقع پر ان کی میزبان فیملی بھی موجود تھی جنہوں نے اس المناک سانحے میں سبیکا کی ہلاکت پر انتہائی غم کی حالت میں اپنے جذبات کا اظہار کیا۔

کینیڈی لوگر یوتھ ایکسچینج کے تحت ہیوسٹن سانٹافے اسکول میں زیر تعلیم 17 سالہ پاکستانی طالبہ سبیکا شیخ گزشتہ دنوں اسکول میں فائرنگ کے نتیجے میں جاں بحق ہونے والے 10 افراد میں شامل تھیں۔سبیکا کے والد عبدالعزیز شیخ کا کہنا تھا کہ سبیکا 3 بہنوں میں سب سے بڑی لیکن بھائی سے چھوٹی تھیں اور 9 جون کو واپس گھر آرہی تھیں۔ان کا کہنا تھا میں انھیں فون کرتا رہتا تھا اور وٹس ایپ پر پیغام بھیجتا تھا اور میری بیٹی نے اس سے پہلے کبھی بھی جواب دینے میں دیر نہیں لگائی تھی، ہم ابھی تک سکتے کے عالم میں ہیں