متحدہ اپوزیشن کے سربراہ ملائم سنگھ یادو ہوسکتے ہیں،صدر سماج وادی پارٹی

کسانوں بنا ملکی تعمیر ممکن نہیں، بھاجپا جھوٹوں کی پارٹی، کسانوں سے محبت کا اظہار محض دکھاو، قرض معافی دھوکہ،یادیو

منگل مئی 22:20

انائو(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 مئی2018ء) سابق وزیر اعلی اور سماج وادی پارٹی کے صدر اکھلیش یادو نے کہا ہے کہ متحدہ اپوزیشن کے سربراہ ملائم سنگھ یادو ہوسکتے ہیں،کسانوں بنا ملکی تعمیرو ترقی ممکن نہیں، بھاجپا جھوٹوں کی پارٹی ہے، بی جے پی کا کسانوں سے محبت کا اظہار محض دکھاوا اور قرض معافی ایک دھوکہ ہے۔۔بھارتی میڈیا کے مطابق بھارتی سابق وزیر اعلی اور سماج وادی پارٹی کے صدر اکھلیش یادو نے کہا کہ اپوزیشن پارٹیاں متحد ہوکر پارلیمانی انتخابات لڑیں گی جس کے سربراہ ملائم سنگھ یادو ہوسکتے ہیں۔

(جاری ہے)

اکھلیش یادو نے کہا کہ نیتا جی کسانوں کے رہنما ہیں۔ ملک کی ترقی و خوشحالی کسانوں کے بغیر ممکن نہیں۔ انہوں نے صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ابھی تک میں نے ضلع پنچایت اور علاقائی پنچایت کے ارکان کی خریدوفروخت کی بات سنی تھی لیکن کرناٹک میں ارکان اسمبلی کو خریدنے کی کوشش کی گئی۔ سپریم کورٹ نے بروقت مداخلت کرکے جمہوریت کو داغ دار ہونے سے بچالیا ۔ریاست کی بی جے پی حکومت پر تنقید کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بھاجپا جھوٹوں کی پارٹی ہے ۔ اس حکومت میں کسان خودکشی کررہے ہیں اور کتے بچوں پر حملہ آور ہورہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کا کسانوں سے محبت کا اظہار محض دکھاوا اور قرض معافی ایک دھوکہ ہے۔