بھارت ، ویزا رشوت اسکینڈل، وزارت داخلہ کے افسر سمیت3 افرادگرفتار

گرفتار شدگان میں 3پاکستانی تارکین وطن اشوک ، گووند اور بھگوان رام ہیں،بھارتی میڈیا

منگل مئی 22:20

نئی دہلی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 مئی2018ء) بھارت میں ویزا رشوت اسکینڈل میں وزارت داخلہ کے افسر سمیت3دیگر افراد کوگرفتار کر لیا گیا۔۔بھارتی میڈیا کے مطابق بھارت میں راجستھان انسداد بدعنوانی بیورو نے ویزا کے بدلے رشوت کے الزام میں وزارت داخلہ کے غیر ملکی ڈویژن میں سینیئر ڈپٹی سیکریٹری پی کے مشرا اور 3دیگر افراد کو گرفتار کرلیا ۔

(جاری ہے)

وزارت داخلہ نے ہندوستانی شہریت یاطویل المیعاد ویزا کی توسیع کیلئے درخواست دینے والے پاکستانی تارکین وطن کے زیر التوا معاملات کا تصفیہ کرنے کا حکم دیا ہے۔

وزارت داخلہ کے ایک اور افسر کا کہنا ہے کہ رشوت برائے ویزہ کے مبینہ گروہ کے بارے میں راجستھان پولیس کی تحقیقاتی رپورٹ کا انتظار ہے۔ راجستھان پولیس کے افسر نے بتایا کہ مبینہ گروہ سرکاری افسران کی ساز باز سے گزشتہ کئی برسوں سے وسیع نیٹ ورک کے ذریعے سرگرم تھا۔ رشوت لینے کے الزام میں گرفتار کئے 3دیگر افراد کے نام اشوک ، گووند اور بھگوان رام ہیں جو پاکستانی تارکین وطن ہیں۔