امریکی ریاست ٹیکساس کے گورنر گریگ ایبٹ نے سکولوں میں فائرنگ جیسے واقعات کی روک تھام کے طریقوں پر غوروخوض شروع کردیا

بدھ مئی 15:12

شکاگو ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 مئی2018ء) امریکی ریاست ٹیکساس کے گورنر گریگ ایبٹ نے ہائی سکول میں فائرنگ سے 10 ہلاکتون کے واقعہ کے پانچ روز بعد سکولوں میں فائرنگ جیسے واقعات کی روک تھام کے بارے میں غوروخوض شروع کردیا ۔ ریپبلکن گورنر ایبٹ نے سکول سیفٹی کے کے بارے میں گول میز اجلاس کے 3 میں سے ایک سیشن میں شرکت جس کے دوران انہوں نے ماہرین سے سکولوں میں فائرنگ جیسے واقعات کی روک تھام کے بارے میں طریقوں بارے مشاورت کی اور اب آئندہ دو دنوں میں گن رکھنے کے ضوابط، طلباء کی ذہنی صحت کے مسائل اور متاثرین کی ضروریات جیسے موضوعات بھی ایجنڈے پر ہوں گے ۔

ایبٹ نے سیاستدانوں اور ماہرین سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ آ پ خواہ ریپبلیکن ہوں یا ڈیمو کریٹ یہ حقیقت ہے کہ ہم سب یہی چاہتے ہیں کہ ان کے ہاتھ میں کوئی ایسی گن نہ ہو جو مستقبل میں ہمارے بچوں کو قتل کر نے کی کوشش کریں۔

(جاری ہے)

انہوں نے سیشن کے آغاز پر خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ ہم ٹیکاس کے لیڈرز جو کام کرنا چاہتے ہیں وہ یہی ہے کہ آئندہ مستقبل میں ہمارا کوئی بچہ سکولوں میں فائرنگ سے ہلاک نہ ہو۔

پہلے سیشن میں کل 23افراد کو مدعو کیا گیا جن میں سکیورٹی امور کے ماہرین ، سیاستدان ، حکام شامل تھے جنہوں نے اجلاس کے دوران تجویز پیش کی کہ ریاست بھر میں طلباء کی سوشل میڈیا پر سرگر میوں اور طلباء کی مانیٹرنگ کا پروگرام شروع کیا جائے تاکہ مستقبل میں اس قسم کا کوئی واقعہ رونما نہ ہو۔