فاٹا کے صوبے میں ضم ، پولٹیکل ایجنٹس کو ڈپٹی کمشنرز کے اختیارات دینے بارے فاٹا سیکرٹریٹ اور صوبائی حکومت نے مشترکہ طور پر حکمت عملی طے کرلی

بدھ مئی 20:26

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 مئی2018ء) فاٹا کے صوبے میں ضم کرنے ، پولٹیکل ایجنٹس کو ڈپٹی کمشنرز کے اختیارات دینے کے حوالے سے فاٹا سیکرٹریٹ اور صوبائی حکومت نے مشترکہ طور پر حکمت عملی طے کرلی ہے فاٹا سیکرٹریٹ کو سول سیکرٹریٹ میں ضم کردیا جائے گا۔

(جاری ہے)

فاٹا سیکرٹریٹ کے تمام ملازمین اورافسران صوبائی حکومت کے پاس شمار ہو نگے ذرائع نے بتایا ہے کہ صوبے میں ضم ہونے کے بعد پولٹیکل ایجنٹ کو ڈپٹی کمشنرز ، اسسٹنٹ پولٹیکل ایجنٹس کو اسسٹنٹ ڈپٹی کمشنرز ، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنرز کے اختیارات دے دیئے جائینگے خاصہ دار اور لیویز فورس سے تمام اختیارات واپس لیکر خیبر پختونخوا پولیس اورکسٹم حکام کے حوالے کردیئے جائینگے ۔

فاٹا کے لئے علیحدہ طور پربیس ہزار سے زائد پولیس اہلکاروں کی بھرتیوں کی سفارشات پہلے سے ہی کی جا چکی ہیں خاصہ دار فورس اورلیویزفورس کو ابتدائی تربیت کے بعد ممکنہ طور پرخیبر پختونخوا پولیس میں ضم کر دیاجائے گا۔ تمام ایجنسیوں میں ڈی پی او ، ڈی ایس پیز ، اے ایس پیز ، انسپکٹروں ، سب انسپکٹروں وغیرہ کے تعیناتی کے لئے بھی حکمت عملی پہلے سے ہی تیار کی گئی ہیں ۔ ایف سی آر کوایک صدارتی ریگولیشن کے ذریعے منسوخ کردیا جائے گا۔