دائو د انجینئرنگ یونیورسٹی کے داخلہ ٹیسٹ دیگر سینٹرز ختم کرکے صرف کراچی میں کرانے کا فیصلہ

جمعرات مئی 16:19

کراچی ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 24 مئی2018ء) دائود یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی نے نئے تعلیمی سیشن برائے 2018-19 میں داخلوں کے لئے ٹیسٹ کا انعقاد چار شہروں کے بجائے صرف ایک شہر میں کرانے کا فیصلہ کیا ہے ،داخلہ ٹیسٹ کراچی لیا جائے گا ، جامعہ دائود انجینئرنگ میں ایڈمیشن پراسیس کا آغاز اگست سے ہوگا جس کے بعد پری ایڈمیشن ٹیسٹ کے لئے کراچی میں ٹیسٹ سینٹر کے مقام ، پری ایڈمیشن فیس اور داخلہ ٹیسٹ میں اہلیت کے طریقہ کار واضح کئے جائیں گے ۔

اس بات کا فیصلہ داود انجینئرنگ یونیورسٹی کے وائس چانسلر ڈاکٹر فیض اللہ عباسی کی زیر صدارت داخلہ کمیٹی کے اجلاس میں کیا گیا جس میں پراسپیکٹس کی فیس کے حوالے سے بھی غور و خوض کیا گیا۔ اجلاس میں پرو وائس چانسلر ڈاکٹر پیر روشن دین شاہ راشدی ، ڈین فیکلٹی آف انجینئرنگ ڈاکٹر عبدالوحید بھٹو ، اکیڈمک کوآرڈینٹر ڈاکٹر دوست علی خواجہ ، رجسٹرار کیپٹن (ر) سید وقار حسین شاہ ، داخلہ اور پراسپیکٹس کمیٹیز کے ارکان ڈاکٹر آصف شاہ ، ڈاکٹر شوکت مزاری ، ڈاکٹر غلام مجتبی اور دیگر نے شرکت کی ۔

(جاری ہے)

اجلاس میں جامعہ میں ہونے والے داخلوں میں شفافیت اور میرٹ پر اطمینان کا اظہار کیا گیا اور آئندہ بھی میرٹ اور شفافیت کا ملحوظ خاص کرنے کا عزم دہرایا۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وائس چانسلر ڈاکٹر فیض اللہ عباسی نے کہا کہ یونیورسٹی میں تعلیمی سرگرمیوں کے استحکام کیلئے انتھک جدوجہد ضروری ہے اور جامعہ دائو د کو جدید تقاضوں سے ہم آہنگ کردیا گیا ہے اسی لئے نئے طلبا کو یہاں بہترین تعلیمی معیار میسر ہوگا۔