توانائی کیلئے موجودہ ذرائع پر انحصار جاری رہا تو مستقبل میں بحران مزید سنگین ہو سکتا ہے،ایوان تجارت لاہور

جمعرات مئی 17:59

لاہور۔24 مئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 24 مئی2018ء) لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر ملک طاہر جاوید، سینئر نائب صدر خواجہ خاور رشید اور نائب صدر ذیشان خلیل نے کہا ہے کہ اگر توانائی کی پیداوار کے لیے موجودہ ذرائع پر انحصار جاری رکھا گیا تو مستقبل میں مزید سنگین بحران کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے لہذا یہ ضروری ہے کہ بجلی پیدا کرنے کے لیے نئے راستے تلاش کیے جائیں۔

(جاری ہے)

جمعرات کے روز یہاں جاری ایک مشترکہ بیان میں لاہور چیمبر کے عہدیداروں نے کہا کہ وقت گزرنے کے ساتھ توانائی کی ضروریات بہت تیزی سے بڑھ رہی ہیں لہذا ہمیں اپنے مستقبل کے لیے آج منصوبہ بندی کرنا ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ بائیو ماس توانائی کے حصول کا ایک ایسا ذریعہ ہے جس سے نہ صرف توانائی کی قلت کے مسئلے پر قابو پایا جاسکتا ہے بلکہ ماحولیاتی آلودگی کے مسائل سے بھی بچا جاسکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ بائیو ماس ٹیکنالوجی کے ذریعے کوڑے کرکٹ سے وافر توانائی پیدا کی جاسکتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ توانائی کے بحران کی وجہ سے معیشت کو بہت سے چیلنجز کا سامنا ہے لہذا اس بحران پر قابو پانے کے لیے جدید طریقے اپنانا ہونگے۔