نئی صورتحال کے تناظر میں پاک چین اعلی سطحی اور اسٹرٹیجک تبادلوںمیں اضافہ کرنا چاہیے، چین

دو طرفہ تعلقات کے فروغ اور دونوں ملکوں کے عوام کے فوائد کیلئے سی پیک کی تعمیر کو آگے بڑھانا چاہیے چینی بیرونی امور کمیشن کے سربراہ یانگ جے چھی کی مشیر خارجہ ناصر خان جنجوعہ سے ملاقات میں گفتگو

جمعرات مئی 19:40

بیجنگ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 24 مئی2018ء) چینی کمیونسٹ پارٹی کی مرکزی کمیٹی کے بیرونی امور کمیشن کے سربراہ یانگ جے چھی نے کہا ہے کہ دو طرفہ تعلقات کے فروغ اور دونوں ملکوں کے عوام کے فوائد کیلئے سی پیک کی تعمیر کو آگے بڑھانا چاہیے،نئی صورتحال کے تناظر میں پاک چین اعلی سطحی تبادلے کو مضبوط اور اسٹرٹیجک تبادلے میں اضافہ کرنا چاہیے۔

چائنہ ریڈیو انٹرنیشنل کے مطابق چینی کمیونسٹ پارٹی کی مرکزی کمیٹی کے بیرونی امور کمیشن کے سربراہ یانگ جے چھی نے پاکستان کے وزیر اعظم کے مشیر برائے قومی سیکورٹی ناصر خان جنجوعہ سے بیجنگ میں ملاقات کی۔اس موقع پر یانگ جے چھی نے کہا کہ دو ہزار پندرہ میں چینی صدر شی جن پنگ کے دورہ پاکستان کے بعد سے دونوں ملکوں کے چار موسموں کے تزویراتی تعاون کے تعلقات کو خوب فروغ ملا ہے۔

(جاری ہے)

نئی صورتحال کے تناظر میں دونوں ملکوں کو اعلی سطحی تبادلے کو مضبوط کرنا چاہیے، سٹڑٹیجک تبادلے میں اضافہ کرنا چاہیے، ہمہ گیر تعاون کو گہرائی تک پہنچانا چاہیے ، چین -پاک اقتصادی راہداری کی تعمیر کو آگے بڑھانا چاہیے تاکہ دو طرفہ تعلقات کی ترقی ہو سکے اور دونوں ملکوں کے عوام کو ٹھوس فوائد حاصل ہو سکیں۔ اس موقع پر ناصر خان جنجوعہ نے کہا کہ پاکستان ہمیشہ چین کیساتھ رہا ہے اور سی پیک منصوبے سے فائدہ اٹھا کر چین کے ساتھ مختلف شعبوں میں تعاون کو نئی بلندی تک پہنچائیگا۔

متعلقہ عنوان :