سیاسی محاذ پر پاکستان تحریک انصاف کو بہت بڑی کامیابی مل گئی

عمران خان اور نواب صلاح الدین عباسی کی ملاقات،بہاولپور نیشل پارٹی تحریک انصاف میں ضم ہو گئی

Syed Fakhir Abbas سید فاخر عباس جمعرات مئی 18:45

سیاسی محاذ پر پاکستان تحریک انصاف کو بہت بڑی کامیابی مل گئی
لاہور(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔24مئی 2018ء) :سیاسی محاذ پر پاکستان تحریک انصاف کو بہت بڑی کامیابی مل گئی ۔۔پاکستان تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان اوربہاولپور نیشل پارٹی کے سربراہ نواب صلاح الدین عباسی کی ملاقات ہوئی ہے۔ملاقات میں بہاولپور نیشل پارٹی کے تحریک انصاف میں ضم ہونے کا اعلان کر دیا گیا۔تفصیلات کے مطابق انتخابات سے پہلے پہلے سیاست کے بڑے ناموں کی تحریک انصاف میں شمولیت جاری ہے۔

گزشتہ ایک سال میں پاکستان تحریک انصاف میں دیگر جماعتوں بالخصوص مسلم لیگ ن اور پاکستان پیپلز پارٹی کے بڑے بڑے ناموں نے شمولیت اختیار کی ہے جن میں رضا حیات، ندیم افضل چن،،فردوس عاشق اعوان اور بڑے بڑے انتخابات جیتنے والے نام شامل ہیں۔جنوبی پنجاب کے نام پر مسلم لیگ ن نے سے بغاوت کرکے جنوبی پنجاب صوبہ محاذ بنانے والوں نے بھی بعد ازاں عمران خان کے ساتھ مل جانے کا اعلان کر دیا۔

(جاری ہے)

اس حوالے سے تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق 100سے زائد الیکٹیبلز اس وقت دیگر پارٹیوں کو خیر باد کہہ کر پاکستان تحریک انصاف میں شامل ہو چکے ہیں جن میں سے زیادہ تر کی سیاسی وفاداریاں مسلم لیگ کے ساتھ تھیں ۔تازہ ترین اطلاعات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف نے سیاسی محاذ پر بڑی کامیابی حاصل کر لی ہے۔۔پاکستان تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان اور بہاولپور نیشنل پارٹی کے سربراہ نواب صلاح الدین عباسی میں اہم ملاقات ہوئی ہے جس میں نواب صلاح الدین عباسی نے بہاولپور نیشنل پارٹی کے تحریک انصاف میں ضم ہونے کا اعلان کر دیا ہے۔

اس موقع پر نواب صلاح الدین عباسی نے عمران خان کی قیادت میں بھرپور سیاسی سفر جاری رکھنے کا اعادہ کیا ہے دوسری جانب پاکستان تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان اور دیگر نے نواب صلاح الدین عباسی کو خوش آمدید کہا ہے اور امید ظاہر کی ہے کہ یہ انضمام پاکستان کی سیاست میں نیک شگون ثابت ہو گا۔یا درہے کہ کل رات یہ خبر آئی تھی کہ پاکستان تحریک انصاف کے بہاولپور نیشنل پارٹی کے سربراہ نواب صلاح الدین عباسی سے معاملات طے پا گئے ہیں ، جس کے بعد بہاولپور نیشنل پارٹی نے پاکستان تحریک انصاف میں ضم ہونے کا فیصلہ کر لیا ہے۔دوسری جانب پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے بھی نیشنل پارٹی کے انضمام کی تصدیق کر دی گئی تھی۔