ساہیوال،نواحی چک 61/5.Lمیں جناز گاہ تعمیر کے تنا زعہ پر فائرنگ،قتل،اقدام قتل کا مقدمہ 25ملزموں کے خلاف درج

جمعرات مئی 19:10

ساہیوال(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 24 مئی2018ء) نواحی چک 61/5.Lمیں جناز گاہ تعمیر کے تنا زعہ پر فائرنگ،،،قتل،،اقدام قتل کا مقدمہ 25ملزموں کے خلاف درج ۔تفصیلات کے مطابق اسی چک کے اصغر علی گروپ اور مقصود دو گروپوں کے در میان امام مسجد ظفر کو فارغ اور جناز گاہ کی تعمیر کا جھگڑا چلا آ رہا تھا کہ بدھ کی رات 10بجے دونوں گروپوں کی عورتوں میں جھگڑا ہو گیا جس پر فریقین اتشی اسلحہ لیکر آگئے تو حملہ آوروں کو آتا دیکھ کر اصغر علی گروپ اپنے گھروں میں دا خل ہو گیا جس پر حملہ آوروں محمد نواز،احمد رضا ،سرفراز،نصیر احمد،سرفراز عالم،نعمان ،مقصود الحسن ،منصور،محبوب،محمد یار ،احمد علی،شعیب،آصف ،صبح صادق ،ولید،عالم ،وزیرا حمد الطاف،رزاق،مماں اور خان چار نا معلوم ساتھیوں نے گھروں میں دا خل ہو کر فائرنگ کر دی ۔

(جاری ہے)

فائرنگ کے نتیجہ میں مسماة گلاں موقع پر جاں بحق ،سلطان،ظہور احمد ،مزمل ،ایک دس سالہ بچے اور 2راہگیر سمیت گولیاں لگنے سے شدید زخمی ہو گئے ۔سلطان خون میں لپت پت ہو نے کی وجہ سے مر دہ قرار دے دیا گیا لیکن جب ہسپتال ڈاکٹروں نے معائینہ کیا تو اسے ونٹی لیٹر پر دال دیا گیا اور وہ زندہ پایا گیا تا ہم سلطان ،ظہور احمد،مزمل ،ڈھولی اور دس سالہ بچی کی حالت نازک ہے ۔۔پولیس نے مقدمہ 21نامزد اور چار نامعلوم ملزموں سمیت 25ملزموں کے خلاف 148,452,324,302اور 149 ت پ درج کر لیا ہے ۔ابھی تک کوئی ملزم گرفتار نہیں ہو سکا۔