وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کسی جج کو نگران وزیراعظم بنانے سے انکار کردیا

اب وزیراعظم سے نگراں وزیراعظم کے معاملے پر بات نہیں ہو گی، ہمیں کہا گیا ہے کہ ججز کو نگراں وزیراعظم کے نام میں شامل نہیں کیا جائیگا: خورشید شاہ

muhammad ali محمد علی جمعرات مئی 20:20

وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کسی جج کو نگران وزیراعظم بنانے سے انکار ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 24 مئی2018ء) وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کسی جج کو نگران وزیراعظم بنانے سے انکار کردیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی اور صوبائی اسمبلیوں کے تحلیل ہونے میں چند روز ہی باقی ہیں۔ تاہم حکومتوں کی مدت ختم ہونے کی تاریخ قریب آنے کے باوجود ملک کے نگران وزیراعظم کے انتخاب کا عمل مکمل نہیں ہو سکا۔ ملک کے نگران وزیراعظم کے انتخاب کے حوالے سے اپوزیشن اور حکومت کے درمیان ڈیڈ لاک برقرار ہے۔

جبکہ اب وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کسی جج کو نگران وزیراعظم بنانے سے انکار کردیا ہے۔ قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف اور پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما و رکن پارلیمنٹ خورشید شاہ نے کہا ہے کہ اب وزیراعظم سے نگراں وزیراعظم کے معاملے پر بات نہیں ہو گی۔

(جاری ہے)

نجی ٹی وی چینل کی رپورٹ کے مطابق سید خورشید شاہ نے کہا ہے کہ وزیراعظم نگران وزیراعظم کے ناموں کے معاملے پر اپنی بات سے پھر گئے ہیں۔

خورشید شاہ کہتے ہیں کہ ہمیں کہا گیا تھا کہ ججز کو نگراں وزیراعظم کے نام میں شامل نہیں کیا جائے گا۔ ہم بھی ججز کے نام دینا چاہتے تھے لیکن پھر وزیراعظم کے اعتراض کے باعث ججز کے نام نہیں دئیے۔ خورشید شاہ کا مزید کہنا ہے نگران وزیراعظم کے انتخاب کا معاملہ اب پارلیمانی کمیٹی کے پاس جائے گا خورشید شاہ کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ پیپلز پارٹی کی جانب سے نوید قمر اور شیری رحمان پارلیمانی کمیٹی میں شامل ہوں گے۔ جبکہ دوسری جانب جمعرات کے روز پارلیمنٹ ہاؤس کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے تحریک انصاف کے رہنما اور پارلیمانی لیڈر شاہ محمود قریشی کا بھی کہنا تھا کہ نگراں وزیراعظم کا معاملہ پارلیمانی کمیٹی جاتا دکھائی دے رہا ہے۔