راولپنڈی،تھانہ صادق آباد کے حدود میں دکان کے سامنے گاڑی کھڑی کرنے پر دکاندار کی فائرنگ سے نوجوان جاں بحق دوسرا شدید زخمی

جمعرات مئی 23:38

راولپنڈی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 24 مئی2018ء) تھانہ صادق آبادکی چوکی بند کھنہ روڈ سے 1فرلانگ کے فاصلے پر چونگی نمبر8میں دکان کے سامنے گاڑی کھڑی کرنے پر دکاندار کی فائرنگ سے جواں سال نمازی جان کی بازی ہار گیا جبکہ دوسرا شدید زخمی ہو گیا اطلاعات کے مطابق 27سالہ الطاف سکنہ کوٹھہ کلاں چونگی نمبر8پر واقع اللہ والی مسجد میں نماز عصر کی ادائیگی کے لئے رکا جہاںمسجد سے متصل جوس کی دکان کے باہر گاڑی کھڑی کرنے پر مقامی دکاندارکی نوجوان سے تلخ کلامی ہو گئی نماز سے واپسی پر دکاندار نے نوجوان الطاف پر فائر کھول دیا جس سے الطاف موقع پر جاںبحق ہو گیا جبکہ اس کا ساتھی شدید زخمی ہو گیا مقتول الطاف کی نعش کافی دیر مسجد کے باہر پڑی رہی جبکہ بار باراطلاع کے باوجود پولیس انتہائی تاخیر سے موقع پر پہنچی یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ تھانہ صادق آباد کے علاقے میں گزشتہ24گھنٹے کے دوران 17سالہ طالبہ اور 13سالہ طالبعلم سمیت مجموعی طور پر 3افراد جان کی بازی چکے ہیں جس میں 1روز قبل 15سالہ دانش کو تاوان کی غرض سے اغوا کے بعد قتل کیا گیا جبکہ جمعرات کی صبح ہی تھانہ صادق آبادسے صرف500میٹر کے فاصلے پر واقع ہارون چوک میں17سالہ ماہا راجہ کو سر میں گولی مار کر قتل کیا گیا جبکہ تھانہ صادق آباد کے علاقے میں ہر سال رمضان المبارک کے مہینے میںڈکیتی میں مزاحمت یا لڑائی جھگڑے کے نتیجے میں ہونے والی فائرنگ سے 4سی6افراد کا قتل معمول بن چکا ہے ۔