امریکی سکیورٹی اہلکاروں کا یمنی قیدیوں پر مبینہ تشدد، تفتیش کی قرارد منظور

جیمزمیٹس تعین کریں گے آیا یمن میں امریکی سکیورٹی اہلکاردوران تفتیش قیدیوں پر تشدد کرتے رہے

ہفتہ مئی 12:42

واشنگٹن(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 مئی2018ء) امریکی ایوانِ نمائندگان نے اٴْس قرارد کو منظور کر لیا ہے، جس میں یمن میں امریکی فوجیوں یا خفیہ اہلکاروں کی جانب سے مقید افراد پر تشدد کا الزام عائد کیا گیا ہے۔

(جاری ہے)

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق اس قرارداد کی منظوری کے بعد وزیردفاع جیمز میٹس نے تعین کرنا ہے کہ آیا یمن میں امریکی سکیورٹی اہلکار گرفتار یمنی افراد پر تفتیشی عمل کے دوران تشدد کرتے رہے ہیں۔ ایوانِ نمائندگان میں یہ قرارداد ریاست کیلیفورنیا سے تعلق رکھنے والے ڈیموکریٹ رکن رًو کھنہ نے پیش کی تھی۔ اس کا ابھی تعین نہیں ہو سکا ہے کہ منظور کی گئی قرارداد کو نئے دفاعی بِل کا حصہ بنایا جائے گا یا نہیں۔

متعلقہ عنوان :