پنجاب ن لیگ کے ہاتھوں سے نکل آگیا

تحریک انصاف آئندہ عام انتخابات میں کیا کرنے جا رہی ہے؟ بڑا دعویٰ کردیا گیا

ہفتہ مئی 13:36

پنجاب ن لیگ کے ہاتھوں سے نکل آگیا
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 مئی2018ء) پاکستان تحریک انصاف کے رہنما شفقت محمود نے کہا ہے کہ کرپشن اور کرپٹ حکمرانوں کے خلاف آگہی مہم نے عوام میں شعور پیدار کیا ہے کہ وہ پاکستان مسلم لیگ(ن) اور پاکستان پیپلز پارٹی کو آئندہ انتخابات میں مسترد کردیں ،ْپنجاب میں تحریک انصاف قومی اسمبلی کی 90 نشستوں پر کامیاب ہوگی۔ایک انٹرویومیں انہوںنے پیپلز پارٹی او ر نواز لیگ پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ دونوں جماعتیں حکومتوں میں رہی اور 3 دہائیوں سے اپنے خاندان کے لیے دولت جمع کی۔

انہوں نے کہا کہ لوگ جان چکے ہیں کہ مسلم لیگ (ن) کی حکومت نے ریاستی وسائل کا منصفانہ استعمال نہیں کیا اور لاہور سمیت تمام جگہ بڑے منصوبوں میں ان کے ذاتی مفاد شامل تھے۔انہوںنے کہاکہ حکومت نے شہریوں کا زندگی کا معیار بہتر کرنے کے لیے کوئی اقدامات نہیں کیے، لاہور میں پنجاب کا 66 فیصد بجٹ استعمال کرنے کے باوجود اب بھی لوگوں کو پینے کا صاف پانی اور ہسپتال میں صحت کی بنیادی سہولیات میسر نہیں۔

(جاری ہے)

2018 میں پی ٹی آئی کی حکومت بننے کے امکانات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے انہوںنے کہاکہ دوسری جماعتوں خاص طور پر مسلم لیگ (ن) کی خرابیوں کے باعث لوگ پی ٹی آئی میں شامل ہورہے ہیں اور تحریک انصاف اس پوزیشن میں ہے کہ وہ آئندہ انتخابات میں حکومت بنا لے گی۔انہوںنے کہاکہ پی ٹی آئی اپنے نعرے ایک پاکستان پر عمل کر رہی ہے ،ْجہاں امیر اور غریب کیلئے سب کچھ برابر ہوگا۔

تحریک انصاف کے رہنما نے کہا کہ 2013 میں ان کی جماعت نے پنجاب میں قومی اسمبلی کی صرف 8 نشستیں جیتی تھیں تاہم اس وقت ان کی جماعت کی مقبولیت میں بے پناہ اضافہ ہوا ہے اور آئندہ انتخابات میں تحریک انصاف پنجاب سے کم از کم قومی اسمبلی کی 90 نشستوں پر کامیاب ہوگی۔انہوں نے کہا کہ 2013 کے انتخابات میں ان کی جماعت نے 85 فیصد نئی امیدواروں کو جبکہ 35 فیصد نوجوانوں کو ٹکٹ دینے کا تجربہ کیا تھا اور کچھ معاملات میں اس طرح کے تجربے کام کرجاتے ہیں۔پارٹی امیدواروں سے متعلق ایک سوال کے جواب میں انہوںنے کہاکہ پارٹی نے اب زمینی حقائق پر توجہ دی ہوئی ہے اور وہ چاہتی ہے کہ ایسے امیدوار سامنے لائے جائیں جو انتخابات میں کامیابی حاصل کرسکیں۔