حکمرا نوں کی جنوبی پنجاب صوبہ دشمنی کھل کر سامنے آگئی : خسرو بختیار

پرانے افتتاح شدہ منصوبوں پر نئی تختیاں لگانے سے کام نہیں چلے گا ، عوام کسی دھوکہ میں نہیں آئیں گے ، رہنما تحریک انصاف

ہفتہ مئی 21:22

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 مئی2018ء) پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنما خسرو بختیا ر نے کہا کہ حکمرانوں کی جنوبی پنجاب صوبہ پر دشمنی کھل کر سامنے آگئی ہے ۔ وزیر اعظم کی جانب سے جنوبی پنجاب کو صوبہ بنانے کے معاملہ پر اختیار کیا جانے والا موقف اس بات کا ثبوت ہے کہ ن لیگ نہ صرف جنوبی پنجاب کو صوبہ نہیں بنانا چاہتی بلکہ وہ آئندہ حکومت کے صوبہ بنانے کے عمل کی بھی مخالفت کرے گی ۔

انہوں نے کہا کہ بلی تھیلے سے باہر آگئی ہے ۔ جنوبی پنجاب کے با ر بار دورے کرنے اور عوام کو بیوقوف بنانے کیلئے جھوٹے وعدے کرنے والے حکمرانوں کا اصل چہرا عوام نے دیکھ لیا ہے ۔ اب عوام کو ورغلانے کی سیاست نہیں چلے گی ۔ ملک کے باشعور عوام حکمرانوں کی شو بازیاں مستر د کر دیں گے ۔

(جاری ہے)

پرانے افتتاح شدہ منصوبوں پر نئی تختیاں لگانے سے کام نہیں چلے گا۔

اب عوام کو دھوکہ دینے کی سیاست نہیں چل سکتی ۔ انتخابات میں عوام بھی حکمرانوں کا احتساب کریں گے ۔خسرو بختیار نے کہا کہ پنجاب کے ہسپتال یورپ کے ہسپتالوں کی مانند ہونے کا دعویٰ کرنے والوں کو چاہیے اپنا اور اپنے خاندان والوں کا علاج بھی انہیں ہسپتالوں سے کروائیں ۔ بڑا بھائی محاذ آرائی جبکہ چھوٹے میاں اپنی مفاہمتی پالیسی سے کس کو بے وقوف بنانے کی کوشش کر رہے ہیں۔قانون کے آگے سر جھکانے کی بات کرنے والے خود قانون شکنی کے مر تکب ہیں۔