ٹھٹھہ: سندھ حکومت کی جانب سے مکلی کے تاریخی قبرستان میں تدفین پر دفعہ 144 نافذ

ہفتہ مئی 22:01

ٹھٹھہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 مئی2018ء) سندھ حکومت کی جانب سے مکلی کے تاریخی قبرستان میں تدفین پر دفعہ 144 نافذ۔ تفصیلات کے مطابق صوبائی وزارت داخلہ سندھ کے سکریٹری قاضی شاہد پرویز نے نوٹیفکیشن جاری کرتے ہوئے عالمی ورثہ میں شامل مکلی کے تاریخی قبرستان میں میتوں کی تدفین پر دفعہ 144 نافذ کرکے قبرستان میں قائم غیر قانونی تجاوزات کے خاتمے کے احکامات جاری کرتے ہوئے تمام متعلقہ اداروں کو اس پر سختی سے عملدرآمد کرنے کی ہدایت کی ہے، دریں اثنا ٹھٹھہ کے سماجی حلقوں کی جانب سے قبرستان میں میتوں کی تدفین پر دفعہ 144 کے نفاذ کی شدید مذمت کرتے ہوئے اس پر سخت تشویش کا اظہار کیا جا رہا ہے اور ان کا کہنا ہے کہ پہلے ہی حکومت کی جانب سے قبرستان کے داخلی راستوں کی بندش اور گاڑیوں سے فیس وصولی کے باعث شہری مشکلات سے دوچار ہیں اور اب تدفین پر بھی پابندی عائد کرکے عوام کی مشکلات میں اضافہ کردیا گیا ہے انہوں نے مطالبہ کیا کہ حکومت فوری طور پر قبرستان میں میتوں کی تدفین پر پابندی ہٹائے بصورت دیگر عوام احتجاج کرنے پر مجبور ہوجائیں گے۔

(جاری ہے)

دریں اثنا مکلی کے تاریخی قبرستان میں تدفین پر پابندی کے حکومت فیصلے پر پیپلز پارٹی ٹھٹھہ کے ضلعی صدر صادق علی میمن نے صوبائی وزیر ثقافت، سیاحت و نوادرات سید سردار شاہ سے فون پر رابطہ کیا ہے جس پر صوبائی وزیر نے انہیں معاملے پر بات چیت کے لیے کراچی طلب کرلیا ہے۔#