سویڈن،یہودی عبادت گاہ پر حملہ،3مہاجرین کے خلاف مقدمہ،ایک شامی اور 2فلسطینی ملزمانکاصحت جرم سے انکار

ہفتہ مئی 22:31

اسٹاک ہوم(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 مئی2018ء) سویڈن میں یہودی عبادت گاہ پر حملے میں ملوث 3مہاجرین کے خلاف مقدمہ شروع کر دیا گیا،ملزمان ایک شامی اور 2فلسطینی ہیں،ملزمان نے صحت جرم سے انکار کر دیا۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق سویڈن میں تین نوجوان تارکین وطن پر ایک یہودی عبادت گاہ پر حملے کے الزامات کے تحت مقدمہ شروع کیا جا رہا ہے۔

(جاری ہے)

جمعے کے روز استغاثہ نے کہا کہ ان تارکین وطن کی عمریں 19 تا24 برس ہیں اور ان میں ایک شامی جب کہ دو فلسطینی ہیں۔ سینیگاگ کی نگرانی کرنے والے کیمروں کی فوٹیج سے ان ملزمان کو شناخت کیا گیا تھا۔ اسثتغاثہ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ ان ملزمان نے مذہب کی بنیاد پر ایک برادری کے خلاف پرتشدد کارروائی کی۔ ملزمان ان الزامات کی تردید کرتے ہیں۔

متعلقہ عنوان :