لاہور، پنجاب میں نگران وزیراعلیٰ کون بنے گا تاحال کسی نتیجے پر نہیں پہنچا جاسکا

ن لیگ کی جانب سے نگران وزیراعلیٰ کیلئے سابق آئی جی پنجاب طارق سلیم ڈوگر اور جسٹس (ر)سائر علی، اپوزیشن لیڈر نے معروف بزنس مین گوہر اعجاز اور سابق چیف سیکرٹری کامران رسول کے نام تجویز کئے

اتوار مئی 20:10

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 27 مئی2018ء) پنجاب میں نگران وزیراعلیٰ کون بنے گا اس حوالے سے تاحال کسی نتیجے پر نہیں پہنچا جاسکا ہے بتایاگیا ہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف اور پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر محمود الرشید کے درمیان نگران وزیراعلیٰ کے ناموں کے حوالے سے ہونے والی ملاقات میں اپوزیشن لیڈر محمود الرشید نے معروف بزنس مین اور ایٹما کے گروپ لیڈر گوہر اعجاز اور سابق چیف سیکرٹری کامران رسول کے نام تجویز کئے تھے جبکہ ن لیگ کی جانب سے نگران وزیراعلیٰ کیلئے سابق آئی جی پنجاب طارق سلیم ڈوگر اور جسٹس (ر)سائر علی نام پیش کئے گئے تھے لیکن تاحال اب تک ان میں کسی بھی نام پر اتفاق رائے نہیں ہو سکا ہے ذرائع یہ بھی بتاتے ہیں گزشتہ روز جاتی امراء میں سابق وزیراعظم نواز شریف کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس میں وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے اپنے بڑے بھائی اور سابق وزیراعظم نواز شریف کو اپوزیشن لیڈر محمود الرشید کی جانب سے پیش کردہ ناموں کے بارے میں مکمل بریفنگ دی تھی اور نواز شریف سے صلاح و مشورہ کیا تھا کہ نگران وزیراعلیٰ کس کو بنایا جائے ۔