گجرات،سی ٹی ڈی کی کارروائی،پنجاب کو بڑی دہشتگردی سے بچا لیا، کالعدم تنظیم کی6 کارندے ہلاک

خودکش جیکٹس، دھماکا خیز مواد اور حساس مقامات کے نقشے برآمد،مرنے والوں میں سرگودھا کا محمد صہیب، عبدالمقیم، محمد فیصل نثار، محمد عثمان عبدالعظیم اور مظفر گڑھ کا رف احمد طارق شامل

اتوار مئی 21:21

گجرات (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 27 مئی2018ء) سی ٹی ڈی نے کارروائی کرتے ہوئے پنجاب کو بڑی دہشتگردی سے بچا لیا، مقابلے میں ریڈ بک میں شامل کالعدم تنظیم کے چھ کارندے ہلاک ہو گئے ،خودکش جیکٹس، دھماکا خیز مواد اور حساس مقامات کے نقشے برآمد کرلیے گئے،مرنے والوں میں سرگودھا کا محمد صہیب، عبدالمقیم، محمد فیصل نثار، محمد عثمان عبدالعظیم اور مظفر گڑھ کا رف احمد طارق شامل ۔

کاونٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ گجرات نے بڑی کارروائی کر کے پنجاب کو بڑی دہشتگردی سے بچا لیا۔ ترجمان سی ٹی ڈی پنجاب کے مطابق نہر اپر جہلم پر شادی وال پاور سٹیشن کی خفیہ اطلاع پر ناکہ بندی کی گئی۔ تین موٹر سائیکل پر سوار 9 دہشتگرد شادی وال سے آئے۔روکے جانے پر انہوں نے گولیاں برسا دیں، سی ٹی ڈی کی جوابی کارروائی میں کالعدم تنظیم کے چھ کارندے مارے گئے۔

(جاری ہے)

مرنے والوں میں سرگودھا کا محمد صہیب، عبدالمقیم، محمد فیصل نثار، محمد عثمان عبدالعظیم اور مظفر گڑھ کا رف احمد طارق شامل ہے۔ ماسٹر مائنڈ صہیب بریگیڈیئر ظہور قادری کو شہید کرنے میں بھی ملوث تھا۔دہشتگردوں سے دو خودکش جیکٹس، کلاشنکوف، پستول، ڈیٹونیٹر سمیت اسلحہ اور دھماکا خیز مواد اور حساس تنصیب کا نقشہ بھی برآمد ہوا۔ ترجمان سی ٹی ڈی کے مطابق اندھیرے کا فائدہ اٹھا کر تین دہشتگرد فرار ہوگئے۔ ہلاک ہونے والے فیروز پور روڈ، بیدیاں روڈ سمیت لاہور میں متعدد بم دھماکوں میں ملوث تھے۔