حکومت رمضان میں بھی عوام کو ریلیف فراہم کرنے میں ناکام ہوچکی ہے‘میاں مقصود احمد

جب تک حکمرانوں کے قول وفعل میں تضاد رہے گاعوام کا ان پر اعتماد بحال نہیں ہوسکتا‘اجلاس سے خطاب

پیر مئی 17:34

حکومت رمضان میں بھی عوام کو ریلیف فراہم کرنے میں ناکام ہوچکی ہے‘میاں ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 مئی2018ء) متحدہ مجلس عمل پنجاب کے صدر اور امیرجماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمدنے کہاہے کہ حکومت عوام الناس کو ماہ مقدس میں بھی ریلیف فراہم کرنے میں بری طرح ناکام ثابت ہوئی ہے۔یوٹیلٹی اسٹورزاور سستے رمضان بازاروں میں ناقص اشیاء ضروریہ کی فروخت اور قلت کی شکایات عام ہیں مگر بدقسمتی سے انتظامیہ اور پرائس کنٹرول کمیٹیاں غیر فعال اور بے حسی کامظاہرہ کررہی ہیں۔

عوام کاکوئی پرسان حال نہیں۔دوکانداردونوں ہاتھوں سے عوام کو لوٹ رہے ہیں۔شکایات کے ازالے کے لیے کوئی موثر پلیٹ فارم نہیں ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روزمنصورہ میں اہم اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہاکہ گرانفروشوں،ناجائز منافع خوروں اورذخیرہ اندوزوں نے اشیاء خوردونوش کے من مانے نرخ مقررکرکے عوام کو دونوں ہاتھوں سے لوٹنے کاسلسلہ جاری کررکھا ہے۔

(جاری ہے)

روزہ داروں کوکسی قسم کاکوئی ریلیف میسر نہیں۔پھلوں،سبزیوں اوردیگراجناس کی قیمتیں آسمان سے باتیں کررہی ہیں۔انہوں نے کہاکہ ضرورت اس امرکی ہے کہ حکومت حقیقی معنوں میں عوام کو ریلیف فراہم کرے اور اس حوالے سے سنجیدگی کامظاہرہ کیاجاناچاہئے۔حکومت کے رمضان پیکیج کے اثرات بھی پوری طرح عوام تک نہیں پہنچ رہے۔۔لاہور سمیت پنجاب بھر میں مہنگائی بے قابو ہوچکی ہے۔

سستے بازاروں کے نام پر عوام کوغیر معیاری اشیاء فروخت کی جارہی ہیں۔انہوں نے کہاکہ عوامی مسائل میں ہوشربا اضافہ ہوچکا ہے۔۔لوڈشیڈنگ کاسلسلہ بھی جاری ہے جس سے روزہ داروں کی مشکلات میں بے پناہ اضافہ ہوگیا ہے۔وزیر اعظم اور وزراء کے لوڈشیڈنگ سے متعلق بیانات محض سبزباغ کے سواکچھ نہیں۔جب تک حکمرانوں کے قول وفعل میں تضاد رہے گا عوام کاان پر اعتماد بحال نہیں ہوسکتا۔